Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » قصہ

قصہ

July, 2021

  • 17 July

    ببول کا جنگل ۔۔۔ جہاں آرا سومرو/ننگر چنا

    جگ سارا موہ کا منگل ہے میرے مَن میں ببول کا جنگل ہے ”چل، اوڈ کے بچے….!“۔ وہ کانٹوں ایسی آواز کی گونجوں پر پاؤں رکھتا چلتا رہا۔ بے پایاں راستہ، لہو لہو پیر۔ کسی نے اس کے وجود کو ریزہ ریزہ کرکے،اس کے گرد لکشمن ریکھا بناکراسے دنیا سے الگ کردیا تھا۔ ریکھا سے باہر جگ میں موہ کا ...

  • 17 July

    مسخ شدہ کہانیاں ۔۔۔ ثانیہ منظور

    کمرہ اندھیرے میں ڈوبا کسی مایوس انسان کی زندگی کی عکاسی کر رہا تھا۔کھڑکی کے سامنے لگی جالی سے چاند کی آسیب زدہ روشنی چھن کر کمرے کے دروازے پر پڑتی، انجیر کے درخت کی شاخوں سے بنی کسی شیطان کے نقوش کو اْجاگر کر رہی تھی۔ پنکھا حسبِ معمول کمرے کی ہی ہوا کو مسلسل گھمانے میں مگن تھا؛ ...

  • 17 July

    میں جدا گریہ کناں ۔۔۔ ماہ جبیں آصف

    کتنے قرن گزرے صدیاں، موسم، بہار برسات، طوفان، آندھی، بارش موسموں کے تموج سے لڑتا، تغیرات سے نبردآزما، کئی زمانوں کا نقیب، آکسیجن فراہم کرتی مصفا فضا میں سانس لیتا ہوا میں دیکھتا جاتا ہوں۔ امتداد زمانہ پیرانہ کہنہ سالی میرا کچھ نہ بگاڑ سکے۔ جانے کب کن ہاتھوں کی مشاقی ہنر مندی نے مجھے اس مقام پر فائز کیا۔ ...

  • 17 July

    بیکا ۔۔۔ نسیم سید

    وہ کب ایک چٹکی سے پکڑ کے اس چھوٹے سے سٹور نما کمرے میں ڈال دی گئی تھی اسے نہیں معلوم تھا۔ اسے یہ بھی معلوم نہیں تھا کہ وہ کتنے سال کی ہے۔ اسے صرف اتنا معلوم تھا کہ جیسے ہی دروازے پر بیل بجے اسے کمرے سے بھاگ کر سٹور میں چھپ جانا ہے  اور تب تک آواز ...

  • 17 July

    عباس کی دلہن ۔۔۔ زہرا تنویر

    وہ تانگے کی اگلی سیٹ پر بیٹھا نجانے کن سوچوں میں گم تھا کہ پاس سے گزرتے راہ گیر نے کہا۔ “بھیا! کیوں وقت برباد کرتے ہو؟ تانگہ چھوڑو، کوئی اور دھندا کرو”۔ “بھیا تم بھی مفت مشورے دینا چھوڑ کر کوئی اور کام کرو”۔ وہ برا مناتے بولا۔ راہ گیر کندھے اچکاتا چلا گیا۔ وہ اپنے کالے گھوڑے کی ...

  • 17 July

    چنگ و رباب اول چنگ ورباب آخر ۔۔۔ نبیلہ کیانی

    جب سے ہوش سنبھالا اپنے آپ کو تجسس کے ساتھ قبرستان میں جاتے دیکھا۔ لیکن مجھے قبرستان جانا پسند کیوں ہے اس سوال کا جواب میرے پاس نہیں تھا۔ اس کیوں کے لیے میرے پاس کوئی وضاحت نہیں ہے۔ شاید کوئی وضاحت ہو لیکن مجھے معلوم نہ ہو۔ لیکن یہ ایک حقیقت ہے کہ میں جب بھی دنیا میں کسی ...

  • 17 July

    دل کی دنیا ۔۔۔ امر جلیل/ننگر چنا

    بیل نے اول تو دیوار پر موجود پرانے گھڑیال کی طرف دیکھا اور پھر کہنی مارکر راجا سے پوچھا:”کیا مجنوں بھی کسی دفتر میں کلرک تھا؟“ ”ان دنوں دفاتر نہیں بلکہ گھوڑوں کے اصطبل ہواکرتے تھے۔“ راجا نے میری طرف دیکھتے ہوئے کہا۔ ”مجنوں نے زندگی میں فقط ایک گھوڑا دیکھا تھا اور اسے بھی ہاتھی سمجھ کر کانپ اٹھا ...

November, 2020

  • 11 November

    آنے والا کل ۔۔۔ لوہسون/شاہ محمد مری

    ”ایک بھی آواز نہیں ………… بچے کو کیا ہوا؟“   زرد شراب کا پیالہ ہاتھ میں لیے سرخ ناک والے کُنگ نے یہ کہتے ہوئے اگلے گھر کی طرف سر کو جھٹکا دیا۔ نیلی کھا ل و ا لے آ ہ و و نے اپنا پیالہ نیچے رکھا اور د و سرا بھر لیا۔ ”آہ“۔  اس نے بھاری آواز میں ...

  • 11 November

    حسرت ۔۔۔ کنور شفیق احمد

    زندگی کیا ہے؟پہلی سانس سے آخری سانس تک یادیں ہی یادیں!۔بس مجھے یاد آیا کہ میں لڑکیوں کے ایک سکول میں پڑھایا کرتی تھی۔ سٹاف میں، میں سب سے چھوٹی عمر کی اور ایک سب سے زیادہ عمر کی تھیں، بوڑھی تو نہیں لیکن بارونق مسکراتے چہرے کے ساتھ اور میں کبھی کبھی شرارتاً انہیں اَمّی کہہ لیا کرتی تھی ...

  • 11 November

    چندن راکھ ۔۔۔ مصباح نوید

    ایکٹ (1) صحن میں تنہا ایزی چیئر پرنیم دراز آکاش پر ٹمٹماتے تارے گن رہی تھی۔ نپے تلے اُٹھتے قدموں کی آہٹ کانوں میں گونجی۔ اپنی انگلیوں کا دباؤ اپنی کنپٹیوں پر محسوس کیا۔ درد ہوک کی طرح اُبھرتامٹتا تھا۔ ”یہ گھر ہے کہ کنجڑ خانہ!“۔ اس نے چونک کر اطراف  میں نگاہیں ڈالیں۔ مسلسل سناٹے کی ضربیں سہتے ہوئے ...