Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » کُھلے قافِئیے کی ایک غزل ۔۔۔ نوشین قمبرانی

کُھلے قافِئیے کی ایک غزل ۔۔۔ نوشین قمبرانی

شِکِستہ لَشکَروں کی تِشنِگی ہْوں
میَں صحراؤں کے ساحِل پر پڑی ہْوں

ہمیِشہ جو رہے وہ نیِستی ہوں
بَقا کے دائروں میں گْھومتی ہوں

تِرے سِینے میِں ہْوں محوِ سفر میَں
خلاء ہوں اور تجھ مِیں پھیلتی ہْوں

میَں اِس لمحے سے پہلے جی اْٹھی تھی
مَیں اِس لمحے سے پہلے مَر چْکی ہوں

یا ہوْں آواز وحشی شورِشوں کی
یا ہَستِ بیکَراں کی خامْشی ہْوں

یا نَخلِستان جیسی مَرگ ہوں میں
یا خْون اور پِیپ پیتی زندگی ہوں

Check Also

بانجھ بنجھوٹی ۔۔۔ انجیل صحیفہ

میں نے  کثرت سے آنکھوں کی بینائی خوابوں پہ خرچی ہے سو آنکھ اب کوئی ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *