Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » فہمیدہ ریاض

فہمیدہ ریاض

میں نے شعر لکھا

اپنے آنسوؤں سے!۔

بلک بلک کر لکھا

خون کی بوندوں سے نقطے ڈالے

اپنے گوشت کو چیر پھاڑ کر ریشے نکالے

اور انہیں قافیہ میں باندھا

بے بسی کے ناخنوں سے

میں نے اپنی ہتھیلی پر شعر گودا

اور تمہیں دِکھایا

تم غلیظ ہنسی ہنس پڑے

”آہاہا………… ننگی شاعری!“۔

تم نے کہا،

اور میرے کلام سے فحاشی کرنے لگے

میں سر پٹکتی رہ گئی

میں سر پٹکتی رہ گئی

ان گیلے دعوت ناموں پر

جو بے حیائی سے مجھے بلا رہے تھے

تمول کی چربی پر پھسلنے کے لیے

اور تمہاری مرغن محفلوں میں جاگرنے کے لیے

Spread the love

Check Also

پہاڑوں کے نام ایک نظم ۔۔۔  قمر ساجد

(شاہ محمد مری کی ایک کتاب پڑھ کر)   روایت ہے پہاڑوں نے کبھی ہجرت ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *