Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی (page 3)

شیرانی رلی

March, 2022

  • 11 March

    آخر کب تک ۔۔۔ رخسانہ صبا

    چلتے چلتے کیسے موڑ پہ آنکلی ہوں شہرِ جبر کے ان سنگین حصاروں سے باہر آئی تو دل کو کیسی خوش فہمی تھی میرے ساتھی یہ سمجھے تھے ہم منزل تک آپہنچے ہیں لیکن اب تو سارا چہرہ دھول ہوا ہے سر پر خاک ہے پاؤں کے چھالے اب تو دل تک آپہنچے ہیں   میری ماں کے شانوں پر ...

  • 11 March

    مجھے بولنے دو ۔۔۔   مطربہ شیخ

    میں جانتی نہ تھی کہ میں صرف بدن ہوں میں جانتی نہ تھی کہ میں صرف وحشت کی ساتھی ہوں میں جانتی نہ تھی کہ میری عمر کتنی ہے تین سال۔ چار سال۔ سات سال۔ تیرہ سال سولہ سال۔ بیس سال ساٹھ سال یا قبر میں مردار مجھے تو بس یہ بتایا گیا کہ تو صرف جسم ہے تو وہ ...

  • 11 March

    مہمیز ۔۔۔ میرساگر

    چالیس اْونٹیں نوّے گھوڑے اَسّی بھیڑیں لاکھ پیادے تیرے آگے چلتے ہیں لاکھ سپاہی پیچھے، پھر بھی اے سردار!۔ مْجھ ناچار کے سر سے چادر کھینچتا ہے

  • 11 March

    عورت ذات ۔۔۔ ناصرہ زبیری

    جلتا سورج، راہیں لمبی ننگے پاؤں، دْور ہے ندی ٹیڑھا پینڈا، گہری وادی موڑ مْڑے گی کب پگڈنڈی کبھی میں رکھوں راہ پہ آنکھیں کبھی اْٹھاؤں رکھ کے گگری   کبھی یہ سوچوں کنکر، پتھر توڑ نہ ڈالیں میری جھجھری کبھی نکالوں کْھلتا گھونگھٹ کبھی سمیٹوں گِرتی چْنری کبھی نکالوں پیر سے کانٹا کبھی سنبھالوں سر پر مٹکی ”بہت کٹھن ...

  • 11 March

    ہچکی ۔۔۔  قندیل بدر

    سنتی بھی ہو کبر کی ماری مٹی کی ڈھیری کتنے سال پرانی ہو گئی یہ تیری چمڑی دیکھ چکی ہے کتنے منظر آنکھوں کی پتلی تھاپ چکی ہے ان ہونٹوں پر کتنے من سرخی کیا کیا ہڑپ لیا ہے تو نے بھوک بھری تھالی کتنا پانی جذب کیا ہے کتنی سانسیں لیں ناپ سکی ہے ان پیروں سے کتنے میل ...

  • 11 March

    حنیف حسرت

    تو اگاں کائے دوست مئے وش اتکہ کلیگا آپ مان کھیری آ دراتکہ من گڈا تئیگاں کیامتا دانکہ بیا بکن امباز تو دل وسِتکا تو منی دابانی گلیں لال ئے روچ مرادانی پمناں اتکہ تو برئے کؤراجور بچارین ئے تو مبوج مستیں لیڑوہ ئے جْتکہ مْرتاں بے شیری آ شنک  ہُرتیں ائے بْزاواڑ ئے وت وتا مِتکہ انگتہ مہرانی بہار ...

  • 11 March

    گواہی ۔۔۔  سعیدہ گزدر

    سنو مریم، سنو خدیجہ، سنو فاطمہ سالِ نو کی خوش خبری سُنو اب والدین بچیوں کے جنم پہ اُنہیں موت کے ٹیکے لگوائیں گے کہ قانون اور اختیار اُن ہاتھوں میں ہے جو پھول، علم اور آزادی کے خلاف لکھتے ہیں، بولتے ہیں، فیصلہ سُناتے ہیں حاکم اور ثقہ مانے جاتے ہیں۔   ہاں سُنو مریم، سنو خدیجہ، سنو فاطمہ!۔ ...

  • 11 March

    ہجرتیں ۔۔۔  سیمیں درانی

    ہجرتیں آسان نہیں ہیں دھرتی سے بازار اٹھ گئے پابجولاں ہجرتیں اب گردن تک آن پہنچیں نالاں ہجرتیں کہ مہاجروں کے لہو مٹی کی زرخیزی کرتے۔ تمام کنویں سوکھ کر کب تک یوسف اگلتے رہیں گے ہجرتیں سہ نہیں پاتیں نادان ہجرتیں اب تو پلکیں جھپکنے پر لعلیں اشک گرتے ہیں اور پھر خاموشی کے ساتھ جوتے کے تلوے سے ...

  • 11 March

    تنہاء کا سفر نامہ ۔۔۔  انجم سلیمی

    شام ہوتی ہی گھر مْجھ سے چھوٹا پڑ جاتا ہے میں رستوں کی بد دْعا پر نکلا ہْوں جہاں آنکھوں کو چہرے کمانے سے فْرصت نہیں لگتا ہے تنہائی مجھ سے اْوب گئی ہے سانسیں میلی ہو رہی تھیں مٹی نے مجھے پھول بنا دیے خوشبو…..  ہوا کی دوست ہو جائے تو بے رنگے لوگ رنگ رنگ کی باتیں کرتے ...

  • 11 March

    طاہی جی نوشکے

    خْدا یا مہر ئنا اِستار ٹھیکی کر ننا کْنڈا ہمو دیوانہ غا بے سار ٹھیکی کر ننا کْنڈا   مرو سحرا ننا خرّْون خِزا رونق کرو ئے چٹ ہتم نا دیگری گندار ٹھیکی کر ننا کْنڈا   ارا کے حْسن ئنا قیمت اے خلکک سرپسر خنتوں صرف زو ئس ہموں واپار ٹھیکی کر ننا کْنڈا   کْنینہ اْست خن تو ...