Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی (page 12)

شیرانی رلی

August, 2021

  • 8 August

    غزل ۔۔۔ میر ساگر

    ایوانوں کا شور   سنائی دیتا ہے حیوانوں کا شور سْنائی دیتا ہے   زنجیروں کی آوازیں چْھو جاتی ہیں زندانوں کا شور سْنائی دیتا ہے   میرے اندر گْل بْوٹے سے لہکے ہیں گْلدانوں کا شور سْنائی دیتا ہے   اندیشوں کی سانسیں چلنے لگتی ہیں طوفانوں کا شور سْنائی دیتا ہے   روز دیے کی لو سے بھپکی اْٹھتی ...

  • 7 August

    غزل ۔۔۔ مظہر حسین مظہر۔۔۔ میلسی

    دل کیوں کسی کو دیجیے قیمت توہے نہیں دنیا کو ایسی شے کی ضرورت توہے نہیں   آنکھوں کا خواب ہے یہ حقیقت توہے نہیں ہاتھوں کو چومنے کی اجازت  تو ہے نہیں   ناجانے کس مقام پہ یہ ربط ٹوٹ جائے مابین دوستوں کے محبت تو ہے نہیں   اے عشقِ یار کس کی نظر کھا گئی تجھے وہ ...

  • 7 August

    ان کہی استانیں ۔۔۔ شبنم گل

    کھمبیوں کو چھوکر آتی ہوا جب نؤں کوٹ کے قلعے کے پاس ماضی کی مہک ساتھ لیکر قلعے کا دروازہ کھٹکھٹاتی ہے تو اس وقت کوئی انوکھی بات فضاؤں میں گردش کرنے لگتی ہے قلعے بھی ان کہی داستانوں کے امین ہوتے ہیں جن میں ادھوری بات کا سحر بیساختہ رقص کرنے لگتا ہے کھوئے لمحے بے اختیار گہری تنہائی ...

  • 7 August

    مانگ رہی ہوں ۔۔۔ عطیہ خان

    کہاں میں جنت مانگ رہی ہوں میں تو اک چھوٹی سی دنیا جس میں ساتوں جیون رنگ کی پینگ پڑی ہو، مانگ رہی ہوں سکھ اور دکھ کی ساری لذت ساری کلفتْ جسم اور روح کے سارے رشتے سارے بندھن خیر اور شر کے سارے روپ گیان دھیان، نروان نہیں دئیے سی روشن دل کی دنیا جس میں تو ہو ...

  • 7 August

    غزل ۔۔۔  طاہر عظیم

    جیسے سوال میں ہو کوئی جواب سا رکھ کر چلا گیا وہ آنکھوں میں خواب سا   ان سا حسین کوئی اس شہر میں نہیں آنکھیں شراب جیسی، چہرہ کتاب سا   کانٹا چبھو گیا وہ دل خون ہوگیا اک چہرہ لگ رہا تھا ہم کو گلاب سا   آوارہ ہوگیا ہے اے دوست عشق بھی پھرتا ہے شہر جاں ...

  • 7 August

    شپے ما کاتکیں وَختے ۔۔۔  میرساگر

    شپے ما کاتکیں وختے عجب جاہ اَت شرابی قدّحے رِتکیں   نگاہاں یکّ و دومی آ ہزاراں داسپانانی ہمک  پیچاں گوں الوت کْت بَڑاں اَرسے تلاوت کْت   شپے ما کاتکیں وختے سواداں موسمانی رنگ باہینت اَنت درہیں پیادگ جَنائینت اَنت ما نشت و کْوزگانی اَنگ ٹاہینت اَنت   گْلاباں رنگ و بْو اِشت اَنت شراباں شیشگانی کْل سبْو اِشت ...

  • 7 August

    غزل ۔۔۔  سعید مزاری

    زِندگی لئیوے ِ دِہ نَیں، بارے دِہ نَیں!۔ ھا ھمنکَر کَستریں کارے دِہ نَیں!۔   قَولئے پھروشغ، اَؤلا مَرک اث مڑدمئے نی ھمے عَیبے دِہ نَیں، مِیارے دِہ نَیں!۔   مَں مَروشاں جْزغایاں ایوکا سَنگتا َ مورے دِہ نَیں، مارے دِہ نَیں!۔   مہر داثیں، مہر گِفتیں ھر کَسا بے وسی ایں، مہر واپارے دِہ نَیں!۔   دَست بیثیں! گْڈ ...

July, 2021

  • 17 July

    آؤ ہم مل کے خواب دیکھتے ہیں ۔۔۔ وہاب شوہاز

    آؤ ہم مل کے خواب دیکھتے ہیں خواب جو بادلوں پہ رکساں ہوں خواب جو زندگی کا ساماں ہوں خواب جو مثلِ اک گلستاں ہوں خواب جو روشنی بکھیرتے ہیں خواب جو سورجوں کو گھیرتے ہیں خواب جو قسمتوں کو پھیرتے ہیں خواب جو آرزو ہیں جینے کی خواب جو گفتگو ہیں سینے کی خواب جو یاس ہیں سفینے کی ...

  • 17 July

    بہت دن لگے ۔۔۔ وصاف باسط

    بہت دن لگے زمین کا سفر طے کرنے میں، خواہشیں پوری کرنے میں اور قدم گننے میں بہت دن لگے اس لڑکی کو دروازے کے روزنوں سے کسی کو تلاش کرنے میں بہت دن لگے پرندے کو خلاؤں کی سیر کرنے میں اور دنیا کا آخری کونا تلاش کرنے میں بہت دن لگے مجھے ڈوب جانے میں جہاں پانی نہیں ...

  • 17 July

    وادی میں گم گشتہ ۔۔۔ علی بابا تاج

    اک اداس وادی تھی چار سو فضا اس کی سرمئی نقابوں سے دل کو لبھاتی تھی دل بھی غضب کا تھا ٹوہ میں یہ رہتا تھا سرمئی نقابوں میں کیا چھپا ہے کہتا تھا دن کے اجالے میں رات چاندنی والی چار چار موسم میں تانک جھانک رہتی تھی سرمئی نقابوں کا حسن وہ فزونی تھا ایک دن وہی وہ ...