مصنف کی تحاریر : شاہ رخ حیدری ایرانی شاعرہ‎

ایرانی شاعرہ کی ایک نظم‎

میں کہ اک شادی شدہ عورت ہوں میں کہ اک عورت ہوں ایک ایرانی عورت رات کے آٹھ بجے ہیں یہاں خیابان سہروردی شمالی پر باہر جا رہی ہوں روٹیاں خریدنے کو نہ میں سجی بنی ہوں نہ میرے کپڑے جاذب نظر ہیں مگر یہاں سرعام یہ ساتویں گاڑی ہے ...

مزید پڑھیں »

خواب کی شیلف پر دھری نظم

گر سمندر مجھے راستہ دیتا تو سفر کرتی اس قندیل کے ساتھ جو شام کا ملگجا پھیلتے ہی ساحل پر روشن ہو جاتی ہے اڑتی ققنس کے ہمرکاب افق کی مسافتوں میں تیرتی مچھلیوں کے سنگ کھوجتی ریگ زاروں میں نیلگوں پانیوں کو سرمئی پہاڑوں میں جادوئی سرنگوں کو لیکن ...

مزید پڑھیں »

پاکستان میں صحافتی کتب کا سرمایہ

اس سلسلے کے پہلے حصے کا عنوان تھا ”پاکستان میں صحافتی کتب کا المیہ“  جو جولائ میں پیش کیا گیا تھا- اس میں ہم نے چند ایسی کتب کا جائزہ لیا تھا جو پاکستان میں جامعات کی سطح پر پڑھائی جارہی ہیں۔ پاکستان میں صحافت کے طلبا و طالبات کو ...

مزید پڑھیں »

ٓامریکا میں عورت کی تاریخ

امریکا کے ابتدائی دور میں، جن غلام عورتوں سے ناجائزاولادیں پیدا ہوتی تھیں، انھیں عدالتوں میں بھی گھسیٹا جاتا تھا، جبکہ گورے آقاؤں سے کوئی باز پرس نہ ہوتی تھی۔ ایسی ہی ایک عورت، جس کا تعلق نیو انگلینڈ سے تھا، پانچویں بار ناجائز بچہ کی ماں بننے پرسزاوار قرار ...

مزید پڑھیں »

گینگ ریپ

وہ فیمنسٹ جو قصاص اور دیت کے مخالف ہیں تجویز دے رہے ہیں کہ ریپ کے خاتمے کے لیے جسم فروشی قانونی بنائی جائے! یہ لوگ قصاص اور دیت کے قانون کے مخالف ہیں کیونکہ کسی شہری، اور خصوصا عورت کے قتل کا خون بہا ادا کرنا، یعنی اس کے ...

مزید پڑھیں »

آل انڈیا بلوچ کانفرنس

چوتھا دن(33دسمبر)۔ یہ کانفرنس کے جلسے کا آخری دن تھا اس لیے منتخب نئی لیڈر شپ نے تقاریر کیں۔ اس کے علاوہ جو انعامات رکھے گئے تھے ان میں اسوہ نبی علیہ الصواۃ والسلام کے انعام کا اعلان ہوا۔ وہ انعام عبدالخالق بلوچ کراچوی کو عطا ہوا جو30روپے کاتھا(A)۔ آل ...

مزید پڑھیں »

کٹھن تعلقات کا سحر

ہاں،ہم پھر جھوٹی داستانیں سنانے لگے ہیں جذبات سے بھری قدیم داستانیں اور ان پہ یقین بھی کررہے ہیں! ہمیں اصرار ہے کہ ہم دو جسموں میں رہنے والی ایک روح ہیں، ہم اس طرح کی فضولیات سنتے ہیں، اور اس کے حق میں نظمیں لکھتے ہیں! ہاں،ہم عامیانہ لطیفوں ...

مزید پڑھیں »

کمیونسٹ ماسکو میں ریپ ناممکن تھا

1974ء میں میری ماسکو تعیناتی ہوئی اور وہاں اڑھائی سال رہا۔ پھر 1977ء میں بھٹو مخالف تحریک کی نذر ہوگیا اور جذبات میں آکے استعفیٰ داغ دیا۔ پاکستان میں تحریک جو چل رہی تھی وہ تقریباً مولویانہ تھی، یعنی اُس کی قیادت کٹر دائیں بازو کے عناصر کے ہاتھوں میں ...

مزید پڑھیں »

غزل

کسی بھی شخص کے شانے پہ بار ِ غیب نہیں لگی ہے بھیڑ انا کی، قطار ِغیب نہیں نظر کے سامنے کم ہے زیادہ اوجھل ہے حسابِ ہست ہے ممکن، شمار ِغیب نہیں ہماری روح کی کیسے ہو آب یاری، یہاں پناہِ نفس میسّر، جوار ِ غیب نہیں ہمیں اجل ...

مزید پڑھیں »

*

چاندنی میں سایہ ھائے کاخ و کُو میں گُھومیے پھر کسی کو چاھنے کی آرزو میں گھومیے شاید اِک بُھولی تمنا ، مٹتے مٹتے جی اُٹھے اور بھی اُس جلوہ زارِ رنگ و بو میں گُھومیے رُوح کے دربستہ سناٹوں کو لے کر اپنے ساتھ ھَمہماتی محفلوں کی ھاؤ ھُو ...

مزید پڑھیں »