ماہانہ محفوظ شدہ تحاریر : اکتوبر 2020

آذربائیجان اور آرمینیا کی جنگ

آذربائیجان اور آرمینیا مشہور کوہِ قاف یا قفقاز کے پہاڑی سلسلے سے متصل علاقے ہیں۔ ان علاقوں کو ماورائے قفقاز یا جنوبی قفقاز بھی کہا جاتا ہے۔ کوہ قاف کا پہاڑی سلسلہ یورپ اور ایشیا کے سنگم پر واقع ہے۔ جو دو سمندروں یعنی بحرِ اسود (بلیک سی) اور بحرِ ...

مزید پڑھیں »

توکلی آ بریخت نیست

مزائیں مڑد گیلیلیو مناں حدا ژہ زیات دوستئے اے خاطرا نہ کہ تہ دوربین ٹاہینتہ نئیں پہ اے سببا کہ تہ ٹیڑدیثغنت ماہا اے دہ نئیں کہ او مرشد ڈغار تہ چرغادیثہ اوروش ثابت کثئے ساکت پر جوآئیں مڑد ،او فہمیندغ مناں دوستئے پہ اے خاطر کہ وختے آ سماکپتئے ...

مزید پڑھیں »

حسد

”تمہیں کس چیز کی کمی ہے جو تم نے ایسا قدم اٹھایا۔ہماری شادی تیار ہے ماں باپ نے تمہیں ہر چیز دی ۔کسی چیز کی کمی نہیں ہونے دی ۔کیا ضرورت تھی جو گھر والوں نے پوری نہیں کی۔پیار خیال توجہ سب ملا تمہیں۔آج یہ دن دیکھایا تم نے؟“۔ اکرم ...

مزید پڑھیں »

میرے انکل جولز

ایک سفید داڑھی والے بوڑھے شخص نے ہم سے خیرات مانگی ۔میرے دوست جوزف ڈاورینچ نے اسے پانچ فرانکس دیے ۔ مجھے حیران ہوتے دیکھ کر اس نے کہا ،”اس بوڑھے غریب کو دیکھ کر مجھے ایک کہانی یاد آگئی ، جسے میں کبھی نہیں بھول سکتا ۔ تمھیں میں ...

مزید پڑھیں »

مینٹل اسائلم میں

"تم ہنستی ہو مجھے اکیلا دیکھ کے میرے رستے میں بیگانہ موسم ، گھائل دن ، نوکیلے کانٹے چُن دیتی ہو ۔۔۔ اور پھر پیڑ کے پیچھے چُھپ کر دیکھتی ہو۔۔۔ میری عمر کا سُوت، آنکھ کے موتی، میرے من کا سونا اِدھر اُدھر بکھرا دیتی ہو۔۔۔۔ تم ہنستی ہو۔۔۔ ...

مزید پڑھیں »

حادثہ

مجھے دیہات سے دارالحکومت آئے چھ برس ہو چکے ہیں۔ اس دوران میں نے نام نہاد ریاستی معاملات کے بارے میں بہت کچھ دیکھا اور بہت کچھ سنا۔ مگر کسی چیز نے بھی مجھ پہ بہت زیادہ اثر نہیں ڈالا۔ اگر ان اثرات کا پوچھا جائے تو میں محض یہ ...

مزید پڑھیں »

*

زندگی چو بُز میشا ساہ ءِ کہچراں چَرَغ اِیں ڈْروہ ڈْروہ دَم بُرتہ اے سَما کدی بیثہ اژ مئے ساعداں کَفَغ اِیں روح اندرا بُرَغ ایں زندگی زہیرانی نوہ گڈّگی لئیویے لئیو لئیو دہ مارا اے سما کدی بیثہ بُستگیں پُراں جَنَغ ایں یار ! گَڈّغاں وَرَغ ایں

مزید پڑھیں »

آنٹی لوسی

دروازے پر لگی برقی گھنٹی لگاتا ر بج رہی تھی۔گھنٹی بجانے والی، گھنٹی کی آواز کوناکافی جانتے ہوئے ہر بار بٹن پر انگلی کے دباؤ کے ساتھ ”باجی“کی صدا بھی بلند کرتی۔ میں نے بڑ بڑ اتے ہوئے ہاتھ میں پکڑی کتاب میز پر پٹخی۔بیلوں اور گملوں میں لگے پودوں ...

مزید پڑھیں »