ماہانہ محفوظ شدہ تحاریر : جولائی 2020

اقتباس

” اے خدا! اے آسمانوں اور زمینوں کے خدا ۔اے غریبوں اور مظلوموں کی مدد کرنے والے خدا!۔اے حق اور اس کے حامیوں کی حمایت کرنے والے خدا، تو ہماری مدد کرنا ۔ ہم بے کس ہیں، ہم مظلوم ہیں۔ ہماری تمام امیدیں تجھ سے وابستہ ہیں۔ اے خدا ، ...

مزید پڑھیں »

کراچی ’’ہجوم سیاست‘‘ کے نرغے میں

بدھ کے روز قومی اسمبلی کا اجلاس شروع ہوا تو چند ہی لمحے گزرجانے کے بعد کم از کم مجھے تو سمجھ آگئی کہ کراچی سے منتخب ہوئے اراکین کو ان دنوں کیا فکر ستائے جارہی ہے۔اپوزیشن سے کہیں بڑھ کر تحریک انصاف اور ایم کیو ایم کی نشستوں سے ...

مزید پڑھیں »

کورونا

کرونا وباء سے لڑنا ہے ڈرنا نہیں کرونا وباء سے لڑیں گے تو رہیں گے۔ہزاروں کرونا ئیں ہمارے ار گرد ہیں ان کا بھی تو کچھ کرنا ہے۔انسان کو اس کی کمزوری مار دیتی ہے۔زندگی خود ایک بڑی جنگ ہے جو جاری وساری ہے۔انسان اپنے آپ سے لڑ رہا ہوتا ...

مزید پڑھیں »

میں کون ہوں

کبھی کبھی جب اپنا چہرہ دیکھتی ہوں ڈر جاتی ہوں سوچ میں ہی پڑجاتی ہوں کون ہے میرے روبرو ویران انکھوں والی حسرت جس نے پالی پھر بھی چھب نرالی جس کی مجھے پہچان نہیں شاید دیکھ رکھا ہے کہیں نام ہے کیا۔کیا اس کا پتہ کاٹ رہی بے جرم ...

مزید پڑھیں »

کشور ناہید ”کورونا“ سے صحت یاب

ناکردہ گناہ کی سزا کا فقرہ میں نے سن رکھا تھا، مگر خود میں نے پہلی بار، اور شاید بھرپور طور پر، کشور ناہید کے ہاتھوں یہ بھگت لی ۔ ہماری اور کشور ناہید کی پہلی ہی ملاقات میں اُس نے بہت نا ترسی کے ساتھ ایسا کرلیا تھا۔…….. اور ...

مزید پڑھیں »

دم گھٹتاہے

ہتھکڑیوں اور طوق سے بڑھ کر بھاری بوجھ گھونٹ رہا ہے دم میرا ماں سانسیں میری روک رہا ہے دم گھٹتا ہے ماں آہ یہ گھٹنا کیوں نہیں ہٹتا صدیوں کے ہر ظلم سے بھاری اس کا گھٹنا میری سانسیں روک رہا ہے آہ مجھے یہ مار رہا ہے ماں ...

مزید پڑھیں »

جنین ئے زندگی او مئے عجبیں دنیا

مئے دنیا بلاہیں، مئے دنیا ءَ چہ منی مطلب بلوچستان۔۔۔ بلوچستان مزن انت۔۔۔ بزانکہ سئے بلوچستان۔۔۔ ہما بلوچستان کہ افغانستان ءُ ایران ءَ انت آیانی چاگردی زند ءِ باروا منی کِرّا سرپدی نہ بوہگ ءِ برابر انت۔ منی دل ءِ مراد بوتگ کہ من بگرداں، اے جاہاں بگنداں، بلے کسانی ...

مزید پڑھیں »

میں عورت ہوں

زخم دل،اشک اور یہ لب کسں قدر ویران ہوں میں کیا ہوں۔۔۔۔۔؟ کیوں ہوں میں۔۔۔۔۔؟ سخت پریشان ہوں میں پری پیکر ہوں یا بسں نشان کہیں بے سخن، بے کلام ہوں میں کیا ہوں۔۔۔۔۔؟ کیوں ہوں میں۔۔۔۔؟ سخت پریشان ہوں میں… کئی گمنام القاب ہیں پیوست کئی خیال میرے نازاں ...

مزید پڑھیں »