Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » دشمن جاں کے لیے۔۔ ۔۔۔ مریم مجید ڈار

دشمن جاں کے لیے۔۔ ۔۔۔ مریم مجید ڈار

آج کل میری پوروں کی سب جنبشیں۔۔

تیرے دلکش خدوخال گنتے ہوئے۔۔

رنگ، خوشبو لفظ عشق لکھتے ہوئے۔۔۔۔

تجھ کو گنتے ہوئے، تجھ کو چنتے ہوئے۔۔۔۔۔

کینوس پر برش سے ہماری کہانی کے سب ممکنہ نام کہنے لگی ہیں۔۔۔

تیری مغرور آنکھوں کو پینسل کی سیاہی سے

اک بار میں ہی مکمل بتانا تو ممکن نہیں۔۔۔

ترے بند ہونٹوں پہ بیٹھی ہوئی وہ دوپہر کے راجا سی مدہوش ساعت

کہ جس میں تری خوشبو میری مہک سے سرعام مل کر۔

خیالوں کے ٹھنڈے بلوریں پیالوں میں بھر کے، تخیل کی مئے کو پلاتی رہی تھی

میں اس ثانئیے بھی اسی گرم خوشبو کی بانہوں میں سمٹی ہوئی

ہری آرزووں کی بل دار شاخوں سے لپٹی ہوئی۔

تیری گردن میں بانہوں کی بیتاب شوخی کی رنگین مالا پروئے ہوئے

کہ دونوں جہاں فقط ایک پل میں سموئے ہوئے۔۔۔

اپنی پوروں کی جنبش میں اک بار پھر سے

ترے مصحف بدن کی تلاوت کی لزت پرونے لگی ہوں۔۔۔۔۔

خیالوں میں سینے کا تکیہ بنائے، تری پناہوں میں سونے لگی ہوں

Check Also

کورا کاغذ! ۔۔۔  امداد حسینی

(“آصف فرخی“ کے لیے)   وہ جو کورا کاغذ میز پر پڑا ہوا ہے اس ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *