Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » غزل ۔۔۔ مسرور پیرزادو

غزل ۔۔۔ مسرور پیرزادو

میں تو ماضی بعید ہوں سائیں!۔

اس لیے ہی جدید ہوں سائیں!۔

 

میرے من میں ہی میرا مرشد ہے

اپنے من کا مْرید ہوں سائیں!۔

 

میں فقط خود میں ہی نہیں موجود

میں تو خود سے مزید ہوں سائیں!۔

 

نا اْمیدی اْمید لگتی ہے

اس قدر پْر امید ہوں سائیں!۔

 

میں ندی ہوں، ملوں گی ساگر سے

شوق کوئی شدید ہوں سائیں!۔

 

موت مجھ کو نہ مار پائے گی

عاشقی کا شہید ہوں سائیں!۔

 

اک پْرانے ہی پیار پہ لکھا

شعر کوئی جدید ہوں سائیں!۔

Check Also

بانجھ بنجھوٹی ۔۔۔ انجیل صحیفہ

میں نے  کثرت سے آنکھوں کی بینائی خوابوں پہ خرچی ہے سو آنکھ اب کوئی ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *