Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » چند برس ہی ہوتے ہیں ۔۔۔ ابرار احمد

چند برس ہی ہوتے ہیں ۔۔۔ ابرار احمد

چند برس ہی ہوا کرتے ہیں

دوڑ لگائیے

آگے نکلیے

اور جان جائیے

اچھل کود بے معنی ہوا کرتی ہے

چار لفظ ہی لکھ لیجیے

کچھ کتابیں پڑھ اور چھاپ لیجیے

دنیا کو الٹ پلٹ دیکھیے

بارشوں میں چھینٹے اڑاتے ہوئے

ان اطراف کا پھیرا لگائیے

جہاں آپ کی آوازیں

ہمیشہ کے لیے خاموش ہوچکیں

 

بچوں اور پھولوں

موسموں اور خوابوں میں

تلاش کیجیے

اسے جو معدوم ہوگیا

 

کلام کیجیے

خود کلامی کی طرح

راز کو رازمت جانیے

بیان فرمائیے

اور اس کی سزا کا لطف لیجئے

 

زندگی میں گھمسان کا رن پڑا ہے

کود نہیں سکتے

تو اپنے جانبازوں کو کمک ہی بھیجتے رہیے

 

رایگانی کا دکھ

حصول کی سرشاری

ایک وقت میں

ایک سی لگنے لگتے ہیں

جلدی کیجئے

 

ایک سے نوے تک

گنتی بس اتنی ہی ہے

 

وہ چہرہ جو آپ کے خیالوں ہی میں بنارہا

اور جس کی کھوج میں آپ نے

لاتعداد چہروں سے استفادہ کیا

اسے بھول جائیے

 

معافی طلب کیجئے

اور اس کے آنسو پونچھ کرگلے سے لگائیے

اُسے۔۔جو موجود رہا ہے آپ کے لیے

کسی اوٹ میں گزار لیجئے

وہ جاں فزا لمحے

جو ابھی گزارے جاسکتے ہیں

 

اور پھرنکل جائیے

منظر سے

 

چند حافظوں میں

کچھ عرصہ زندہ رہنے کے لیے

Check Also

کھڑکی میں چاند ۔۔۔ فہمیدہ ریاض

میں جس کمرے میں رہتی ہوں اس کمرے میں اک کھڑکی ہے گر رات کو ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *