Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » صفدر صدیق رضی

صفدر صدیق رضی

گنوا چکا ہوں جو اس کا ملال رکھتا نہیں

جو میرے پاس سے اس کو سنبھال رکھتا نہیں

زوال کا میں کبھی اجتمال رکھتا نہیں

میں اپنی ذات میں کوئی کمال رکھتا نہیں

ہیں میرے دوست بہت کم عدوبہت سے ہیں

میں اپنے سُود وزیاں کا خیال رکھتا نہیں

زُباں پہ حرفِ طلب آکے لوٹ جاتا ہے

سوال رکھتاہوں دستِ سوال رکھتا نہیں

وہ کب ملا تھا بچھڑ کب گیا نہیں معلوم

کہ میں حسابِ فراق و وصال رکھتا نہیں

زباں کے ہوں کہ نظر کے کبھی نہیں ہوتے

میں زخم زخم ہوں اور اندمال رکھتا نہیں

Check Also

اوست ۔۔(چاچا بزدار ئے ناما) ۔۔  تاج بلوچ

ہورو، اے دنیا مئیگ وتئی گیگانہ اِنت پرچا وتی ارسانی باوستا دگہ اندوہ و ڈکان ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *