Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » غزل  ۔۔۔ وھاب شوھاز

غزل  ۔۔۔ وھاب شوھاز

ایسے چلے, کہ بعد میں مڑ کر نہیں دیکھا
دنیا نے ایسا کرب کا منظر نہیں دیکھا

قطرے میں زندگی نے سجائی تھیں محفلیں
صحرا میں پیاس جتنا سمندر نہیں دیکھا

اْس شہرِ سنگبار سے لوٹے تو اس طرح
پتھرتو ہاتھ میں تھا مگر سر نہیں دیکھا

مجھ سے کیاپوچھتے ہو ہماری گلی کا حال
مدت سے میں سفرمیں رہا گھرنہیں دیکھا

شوھاز ، دوستوں سے گلہ ، نا شکا یتیں
یاروں کو ساتھ وقت پر اکثر نہیں دیکھا

Check Also

سریاب روڈ پر ایک خزاں کی شام ۔۔۔ رضوان فاخر

میری رگ رگ میں اتر آئی ہے انجیکٹڈ شام کانپتا جاتا ہوں سگریٹ کے کش ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *