Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » افشین کمبرانڑیں

افشین کمبرانڑیں

نظم
پیاس ہے اور بے امانی ہے..
انہیں ہلکے سروں میں صدیوں سے
جاوداں عشق کی کہانی ہے….

نہ جدائی نہ تشنگی کا گماں..
نہ کوئی حُزن ہے نہ ہجرت ہے…

اس کہانی میں عمر بھر کے لئے
میری، میرے وطن سے قربت ہے..

Mystery

یہ آنکھیں
یہ حسین و دلرُبا آنکھیں
خمارِآگہی سے نیم وا آنکھیں۔
خرد کی کاہکشائیں جن کے رستوں سے گزرتی ہیں
یہ آنکھیں جن میں خوابوں کے عزیز از جان پُراسرار موسم سانس لیتے ہیں
زمینیں اپنے سارے رنگ ان آنکھوں میں بھرتی ہیں
عالِم آسماں ہر راز اِن پہ وار دیتے ہیں
یہ آنکھیں جب مِری آنکھوں کے ساحل پر اترتی ہیں
وفا کی سیپیاں چُن کرفضاوں میں پِروتی ہیں
ہوائیں گُنگُناتی ہیں
محبت کے سُروں میں گُم زمانے رقص کرتے ہیں

Check Also

فہمیدہ ریاض

کوتوال بیٹھا ہے کیا بیان دیں اس کو جان جیسے تڑپی ہے کچھ عیاں نہ ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *