Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » غزل ۔۔۔ ڈاکٹر منیر رئیسانی

غزل ۔۔۔ ڈاکٹر منیر رئیسانی

گلِ نایاب کی مہکار لیے پھرتا ہوں
یہ جو میں خواب کے انبار لیے پھرتا ہوں

شورشِ دل کو لیے دشت میں جا ٹکتا ہوں
دشت کو پھر سرِ بازار لیے پھرتا ہوں

کس کی آواز پہ کِھلتے چلے جاتے ہیں گلاب
کس چہک کے لیے اشعار لیے پھرتا ہوں

معجزے جس کی ہتھیلی پہ دھرے رہتے ہیں
اْس کی خواہش پہ میں آزار لیے پھرتا ہوں

ایک پل جو کسی سائے میں ٹہرنے ہی نہ دے
دہر کی نار میں وہ بار لیے پھرتا ہوں

بے سْتوں اک نیا ہر بار نظر پڑتا ہے
اس لیے نت نئے اوزار لیے پھرتا ہوں

Check Also

شہناز شبیر 

اَدھورا پن (روز گل کے نام) چھوٹی سی اس دنیا میں اِ ک میں اور ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *