Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » نظم ۔۔۔ ثانی خان

نظم ۔۔۔ ثانی خان

دادخواہانِ شہر کے صف میں
وہ بھی ہیں جن کی تسبیحات لہو۔۔
جن کا منبر ہے مقتلِ انساں
بو بارود جن سے آتی ہو
جن کے نعروں میں دادِ قاتل ہو
کشت و خوں زندگی کا حاصل ہو
رخ پہ آثارِ بود باطل ہو
ہاتھ خنجر تو لب پہ بسمل ہو
وہ قصیدہ حق سنائیں کیا
شہ کا کردار وہ نبھائیں کیا
دادخواہان شہر کے نالے
تا حد سرخی اخبار سہی
ان کے کاندھوں پہ گراں قدر یہ انبار سہی
منصفی کے سبھی آثار مٹ جاتے ہیں
سرخ تاریخ کے ادوار لکھے جاتے ہیں

Check Also

یہ تو پرانی ریت ہے ساتھی! ۔۔۔ گل خان نصیر

جتنے ہادی رہبر آئے انسانوں نے خوب ستائے کَس کے شکنجہ آرا کھینچا ہڈّی، پسلی، ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *