Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » غزل ۔۔۔ محسن چنگیزی

غزل ۔۔۔ محسن چنگیزی

موسم کو یاد حرفِ دعا رہ گیا میرا
دستِ خزان پھول کِھلا رہ گیا میرا

کیا بند کر کے آیا ہوں میں کچھ خبر نہیں
دروازہ پھر سے گھر کا کْھلا رہ گیا میرا

باہر میں آگیا ہوں خدوخال کے بغیر
چہرا اک آئینے میں رکھا رہ گیا میرا

دریا کی بوند بوند میں آنکھوں سے پی گیا
وہ پیاس تھی کہ کوزہ دھرا رہ گیا میرا

برگد کا ایک پیڑ تھا جو کٹ کہ گر گیا
کہنے کو اور شہر میں کیا رہ گیا میرا

Check Also

ٹکڑیاں (چھوٹی نظمیں) ۔۔۔۔۔ تمثیل حفصہ

۔1۔کشتی جل جاؤ۔۔۔۔۔ جاؤ۔۔۔۔۔۔ چاند کے پار۔۔۔۔ اک ندیا بہتے پانی کی۔۔۔۔ نیند کی لوری ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *