Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » نظم ۔۔۔ معراج دانش

نظم ۔۔۔ معراج دانش

ہاں میں اک بچہ ہی تو ہوں
وہ بچہ جس کو پنپنے میں شاید
کئی صدیاں لگ جائیں!۔
وہ بچہ جس کے چہرے پہ اداسی
چپک کے رہ گئی ہو
وہ بچہ جس کی آنکھیں حیرت و یاس
کے بوجھ سے آدھ کھلی رہ گئیں
وہ بچہ جس کا آنسوؤں سے بنا
رستہ رخسار سے گزرتا ہوا
کہیں گم ہو جاتا ہے
اور ہونٹوں کے بنجر کناروں
یہ پڑی ہوئی دراڑیں کبھی
سیراب نہ ہوں
ہاں میں اک بچہ ہی تو ہوں

Check Also

نثری نظم ۔۔۔ نور محمد شیخ

خود کو خوش اَسلُوبی کے ساتھ زندہ رکھو جینا بہت اہم جیے جاؤ حصولِ منزل ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *