Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » رضوان فاخر ۔۔۔ نادید کی دید

رضوان فاخر ۔۔۔ نادید کی دید

وہ تیتلی
جو جنمی نہیں ہے
مجھ کو دکھائی دیتی ہے

وہ اک پھول
جو اگا نہیں ہے
اس کے گرد وہ گھومتی ہے

اور وہ باغ
جو کہیں نہیں ہے
اس میں دونوں رہتے ہیں

اور کتنے خوش رہتے ہیں

قاصدِ عہدِ شامِ شکستہ

تمام لوگو!۔
گھروں سے نکلو
کہ ہارؔ آیا ہے اور میران ؔ کے بنا ہی
تمام لوگو!
گھروں سے نکلو
اب ایک گھوڑا ہی جنگ کی ساری داستاں کو
بیاں کرے گا
میرانؔ : بلوچی رزمیہ شاعری کا ایک کردار
ہارؔ : میران کے گھوڑے کا نام

Check Also

نثری نظم ۔۔۔ نور محمد شیخ

خود کو خوش اَسلُوبی کے ساتھ زندہ رکھو جینا بہت اہم جیے جاؤ حصولِ منزل ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *