Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » معجزوں کی تلاش میں گم ہوں ۔۔۔ بن ظہیر بلوچ 

معجزوں کی تلاش میں گم ہوں ۔۔۔ بن ظہیر بلوچ 

تم اکثر کہتی تھی
مجھے اندھیروں سے ڈر لگتا ہے
اسی واسطے
میں پہلی رات تمہاری قبر پہ گر کے رویا
تمہیں تسلی ہو
اکیلی نہیں ہو تم
تمہارے سرہانے بیٹھا اک شخص
کبھی تمہاری راست گوئی
تمہاری مخلصی و محبت کا حق ادا نہ کر سکا

کتنے افطار و سحر یہ دعا مانگی
یہ معجزہ ہو تم قبر سے نکل کر کہو مجھے دعاؤں نے زندہ کردیا
ایسا نہیں ہوا
کیا یہ معجزہ ہو ہی نہیں سکتا ؟
یا اک میرے ساتھ نہیں ہو سکا
میں کبھی اپنے ایمان کو کوستا رہا کبھی ہر آتما کو.
یہ گمان ہے میرا
میرا گمان ہی ایمان ہے میرا
تم کبھی تو نکلو گے
وہ حشر ہی ہو
میں پرامید ہوں
کیا تمہیں خبر ہے
اس خوشی کے عالم میں
کتنے مایوس نگاہوں سے اس ویران گھر کو تکتا رہا ؟
کیا تمہیں خبر ہے
ہم اس نعمت میں بھی اکیلے ہوتے ہی تمہیں یاد کرکے رو پڑے تھے؟
تمہاری آواز گونج رہی تھی میری آواز کے ساتھ
کبھی دوست بن کر ہمیں سمجھایا
سارے رشتے تھے اک تم سے منسلک
ساری ذمہ داریاں اک تمہارے سر تھیں
کیا تمہیں خبر ہے
وہ محبتوں کے رشتے
وہ ہمدردیاں
وہ ایک ہو کے ایک ہونا
شاید دفن ہو گئے سب
ساتھ تیرے
تمہارے ساتھ
مرچکے ہیں
سارے رشتے
تمہارے ساتھ
محبتیں بھی
وفات پا گئی ہیں

Check Also

نہ وش اِنت کیچ مرچاں ۔۔۔ عبداللہ شوہاز

لگشتگ موسم ئے مزواک دستان نہ گوات ئے آمگیں لنٹان پنّے نہ درچکاں گواڑ گے ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *