Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » تم سے مجھ کو بچھڑے ساجن ۔۔۔ مبشر مہدی

تم سے مجھ کو بچھڑے ساجن ۔۔۔ مبشر مہدی

کتِنے بَرس اَب بیت گئے ہیں
سال،سمے،گھڑیاں اور صدیاں
کوئی بھی وقت کا پھیر،بکھیڑا
تیری یادوں بِن نہیں گزرا
چاہے سجن وہ بہار کی رْت ہو
چاہے برسے گھٹا ساون کی
خِزاں کے خالی ہاتھ کٹیں جو
سر ما کی روپہلی کرنیں رقص کریں اک پائل پہنے
سوچوں کے بے اَنت سفر میں
جِسم کے سارے بند مساموں کے اندر تک
گرم ہوائیں ڈھیروں چھید کریں بھی چاہے
سارے موسم
ساری بیتی رْتیں اوساجن
تْجھ سے مْجھ کو چھین نہ پائیں
اور اگر میں بھولنا چاہوں کیسے بْھولوں جاناں تجھ کو
تْوتو میرے ساتھ ہے ہر دم
دیکھوں اْفقَ تیرے سْندر رْخساروں جیسے
صبحِ صادق روشن آنکھیں
شفَق ترے مثِرگاں کی دھْول لگے ہے مجھ کو
زْلفیں جیسے اودھ کی شام بھلادیں پل میں
تیری یادمیں کٹتی جائیں راتیں ساری
دیکھتے دیکھتے وہ مہتاب جو تیرے چہرے جیسا روشن
ماند پڑے وہ
کسی بھی رْخ سے میرے ساجن
تْو اپنی پر چھائیں ہٹادے
یا پھر مْجھکو اپنی جھلک دکھلا دے ساجن
تیرے بعد جو کوئی بھی میرے دل پر دستک دے گا سن لے
اس کو یہ تو سہنا ہوگا
بات کرے گا وہ مْجھ سے لیکن
میں اس لمحے تْجھ سے باتیں کرتا ہوں گا
شاید مْجھ میں تْو ہے اب تو
شاید تیرے فراق میں جو بھی
ساجن میرے ساتھ چلے گا
اس کو تیرے ساتھ ہی زندہ رہنا ہوگا

Check Also

گل خان نصیر

بچے رو رو نین گنوائیں بوڑھے در در ٹھوکر کھائیں چُھپ چُھپ مائیں نیر بہائیں ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *