Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » 2015 » October (page 4)

Monthly Archives: October 2015

ترقی پسند فکر اور عصری تناظر ۔۔۔ شاہ محمد مری

(ملتان میں سرائیکی ادیبوں کی کانفرنس کے لیے لکھا گیا) پیر کی ہمیشہ کوشش رہتی ہے کہ اس کا خلیفہ بھوکا، ننگا، اور تنگ دست رہے ۔ تاکہ وہ اُس کی روحانی محتاجی اور جسمانی چاکری میں ہی لگا رہے ۔ اور ہر نئے پر تجسس دکھ میں مزید خلوص سے اُسے مدد کوپکارتا رہے۔ سلسلہ دکھوں اور دعاؤں کا ...

Read More »

بے بسی ۔۔۔ آئیون راجکمار بینر جی

وفاقِ پاکستان کے 2013 کے دوسرے جمہوری انتخابات میں قسموں اور وعدوں سے پاکستانی ووٹرز کو موجودہ وزیراعظم اور صدر پاکستان مسلم لیگ ن اور اسی سیاسی جماعت کے پنجاب میں وزیراعلیٰ جو ان کے بھائی صدر پنجاب پی ایم ایل ن نے چھ ماہ کے قلیل عرصہ میں منتخب ہونے کے بعد یقین دہانیاں کروائیں کہ وہ اول بجلی ...

Read More »

دانیال طریر کی شاعری اور تنقید ۔۔۔ ڈاکٹرروِش ندیم

دانیال طریرہمارے باصلاحیت ہم عصر ہیں۔ ان کی اولین کتاب’’ آدھی آتما‘‘ پر نظر دوڑائیں تو اس کی جدید شعری جمالیات ہمیں نئے خیالات، نئے امیجز، اور ہندی لفظیات کے ساتھ کچھ نیاکہنے کی شدید خواہش لیے دکھائی دیتی ہے۔ایک طرف تو اس نئے پن پر جلیل عالی جیسے مخصوص نظریات کے حامل شاعرکا اضطراب اور ان کی نظریاتی بے ...

Read More »

مولوی محمد شریف بزدار ۔۔۔ خالد شریف بزدار

دنیا میں کئی لوگ آئے اور جہان فانی سے کوچ کرگئے۔ اِن میں کسی کسی کے نقش رہتی دنیا تک قائم رہیں گے۔ کئی بے نام ہوکر رخصت ہوئے۔ کئی لوگوں نے اپنی زندگی کو دوسروں کے لیے وقف کیے رکھا اور اپنی ساری زندگی بجائے مال و دولت جمع کرنے کے یا دنیا کے عیش و آرام حاصل کرنے ...

Read More »

سورج کا شہر، گوادر ۔۔۔ شاہ محمد مری

اگلے دن بندرگاہ کا ایک افسر ،داؤد بلوچ ہمیں پورٹ میں گھما رہا تھا۔جب ہم چینیوں کے رہائشی ؍دفتری علاقے سے گزر رہے تھے تو وہاں مجھے دیوار پر ایک چینی کہاوت( انگریزی میں ترجمہ شدہ )بہت ہی موٹے الفاظ میں لکھی نظر آئی۔ میں نے وہ فقرہ پڑھا ۔اور جیند خان، ضیا شفیع اور داؤد بلوچ کے لیے دوبارہ ...

Read More »

نہ اپیل ، نہ تحریک

بلوچستان میں زبان و ادب کی بہبود اورترقی کے لیے بے شمار ادبی لسانی تنظیمیں کام کررہی ہیں۔بکھری ہوئی، الگ تھلگ اور بغیر کسی باضابطہ آپسی ربط و روابط کے۔ ہم گذشتہ پچاس برس کے شاہد ہیں کہ یہاں کبھی ایک ایسی ادبی تنظیم موجود نہیں رہی جسے بلوچستان بھر میں اپنی تنظیمی موجودگی کا دعویٰ ہو۔ یا اس کی ...

Read More »