Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » 2014 » December (page 5)

Monthly Archives: December 2014

کوئی چراغ جلاﺅ بڑا اندھیر ہے ۔۔۔ ڈاکٹر غلام سرور ساگر

عاقلو، دیدہ ورو، اے میرے پیارے لوگو اس سے پہلے کہ خرابات کا دروازہ گرے رقص تھم جائے کہیں حُسن و جوانی نہ رہے بُوند بھر رس کو ترس جائیں شرابی آنکھیں اور محمور حسینوں کی کہانی نہ رہے قطرے قطرے کو پکاریں جلے گلشن کے گلاب اور برسات میں پانی کی روانی نہ رہے کاسہ¿ دل میں سِمٹ آئیں ...

Read More »

جوانسال بگٹی کے نام ۔۔۔ زبیر شاد

تئی لبزانی مانکشتگیں تزبی ھیال ئِ دُور سَریں کِشک ئَ تئی احوال شیئرانی ایرنت راج دپتراں راج ئِ تو بَست اَت شئیر تپاکی ایں تئی لبزانی لبزانی چہر ءُ رنگ چوش مُلا فاضل ئِ دروشم گوں مُلا قاسم ئِ گیگ ئَ او بُرزی تئی ھَیالانی چوش کوہ ءُ مِک اتنت دیم ئَ تئی شیئرانی ڈولداری چوش چاردہ ماہکانی اَت تئی ...

Read More »

ڈوڈ ۔۔۔ عزیز مینگل

ہیکل آخر ماتے ہکل ایت خرماتے کا باڑار مال ءِنا پراگندہ حال ئِ نا جگہ جون و جنچی دے تُو وسال ئِ نا کفتُو فتُو کو ڈہریس کِینژ و ک کِتوک ڈوڈ ہریس داڑان مُست کہ ساندہ کِن بُومبار و بُن بیل مریس ہوش کہ مُخ ئِ راست کرک باسکات تینا باسک کرک مُخ ئِ تینا ڈڈ تفک جُہداَنا ہرف ...

Read More »

کیا یہاں آزادی نہیں ہے؟ ۔۔۔ شیخ ایاز

گیدڑ آزاد ہیں، مکھیاں آزاد ہیں، یہاں کے دانشور آزاد ہیں، شعراءٹی وی پہ مشاعرے کررہے ہےں۔ یہ کسان آزاد ہیں، جب چاہیں، وہ اپنے سر سے جوئیں نکال سکتے ہیں۔ سب تو آزاد ہیں، اس چھید چھید دھرتی پر۔ چھید، جن میں اب سانپ بستے ہیں! اور درندے اپنے بچے پال رہے ہیں!

Read More »

نوحہ بلوچستان کا ۔۔۔ کشور ناہید

قبائے شہرِ زرغوں کیوں ترے دا من، تری گلیوں میں افسردہ لہو بہتا ہی رہتا ہے اٹھے ہیں ہاتھ ان کی فاتحہ پڑھنے کہ جنکے نام سے واقف نہیں ہیں اے مرے چلتن کی آزردہ ہواﺅ تم نے تو لک پاس پہ بھی امن دیکھا تھا ہزارہ بستیوں میں پھول دیکھے تھے یہ کیسا ماتمی موسم ہے خوں آشام صبحیں ...

Read More »

سائیں کمال خان ۔۔۔ برملا خان برمول

کمال خان دہ خدائے کمال وو سپین سپسلئی یو جمال وو زموژ استاد دہ سیاست وو دہ محبت امن مشال وو اسپین ژیرئے کمال خان وو پہ زوانی کشے لکہ لال وو پیدا کڑے مولالوئے وو لہ ازلہ یہ لوئے خیال وو لہ کچنی سرہ کچنئی وو لہ لوئے سرہ لوئے سیال وو لہ ہر چاسرہ عزیز وو لکہ خوژ ...

Read More »

کوشش سی ۔۔۔ طاہرہ اقبال

اس عشق کی نوعیت فرق تھی۔ یہ عشق دو مخالف جنس کے حسن و محبت کا بے اختیار اظہار نہ تھا ، بلکہ دو اہلیتوں اور ذہانتوں کے ٹکراﺅ کا فطری ردِّ عمل تھا۔ ایسا ٹکراﺅ جو دشمن بنا دیتا ہے یا پھر دوست ۔ جوں جوں یونیورسٹی میں اِس عشق کے چرچے پھیل رہے تھے، اس کی توجیہات بھی ...

Read More »

تابوت ساز ۔۔۔ عابد میر

دکان کا مرکزی دروازہ کھول کر وہ اندر داخل ہوا۔ ہاتھ میں پکڑا ہو ا اخبار اس نے دروازے کی دائیں جانب استقبالیہ کی میز پہ رکھا۔ اس میز کے نچلے کونے میں پڑا ہوا ایک کپڑا اٹھایا۔منہ میں کچھ آیات بڑبڑاتا ہوا ،اسی کپڑے سے تابوتوں کی گرد جھاڑنے لگا۔درجن بھر تابوں پہ کپڑا لگا چکا تو ایک بوتل ...

Read More »

کھلے پنجرے کا قیدی ۔۔۔ آدم شیر

”یہ موت کا گولا ہے یا پنجرہ ، ایک بہت بڑا پنجرہ، میں نہیں جانتا۔ ایک بار مجھے محسوس ہوا کہ یہ موت کا گول گول بڑا گولا ہے جس میں مَیں موٹرسائیکل چلا رہا ہوں۔ کبھی گھڑی کی سوئی کی طرح دائیں سے بائیں گھوم رہا ہوں اور کبھی موٹرسائیکل کو آڑھا ترچھا بھگا رہا ہوں۔ یوں اوپر نیچے ...

Read More »

کچرا چُننے والے ۔۔۔ اقبال خورشید

یہ اُس انتہائی غیراہم المیے کی رُوداد ہے، جس نے میرے طرز زیست کو یک سر بدل دیا! کچرا چُننے والے باپ بیٹے کے بہیمانہ قتل کو ایک معمول کا واقعہ خیال کرتے ہوئے اُس یخ بستہ شام تو مَیں اپنی غیرضروری مصروفیات ہی میں جُٹا رہا، لیکن ٹھیک چار روز بعد، یک دم گلی کے نکڑ پر وقوع پذیر ...

Read More »