Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » 2014 » August (page 2)

Monthly Archives: August 2014

نظم….صنوبر سبا

چلو اب ماسک پہن کر کھیل کھیلنا بند کر دو جب کوئی بڑی خطا ہو جاتی ہے تو پھر ! پچھتاوا یا بے نیازی کچھ بھی کام نہیں آتا اب تو تم سارے مسائل کا حل ڈھونڈ ہی لو اور ماسک پہن کر کھیل کھیلنا بند کر دو۔۔

Read More »

دستونک….شمیم شاہ جی

نے پری و نے شہ حوُر ئے چمّاں گاریں جلوہا عشق ئِ ماہ ما ہتاپ بیت شتّی بہاریں جلوہا لِذّتے مان بیت ہزار کیپیں بِہ زِرد ئے ترانگاں من دُچار باں کہ گوں امروز ئِ خماریں جلوہ ئَ مئے وفا ئے لاڈاِنت گرداں چو خلیلا کنت پہ وت وہدے نوک ئِ وہدے روچ ئِ تابواریں جلوہا دوشی تی داب ئِ ...

Read More »

عطا شاد….شامیراکبر

ہم نے مست و مجنون محبتیں سکرات میں پڑی دیکھی ہیں ہم نے بوسے لینے والے ہونٹ بیابانوںمیں بلبلاتے دیکھے ہیں م نے دیداروں کی متمنی، ٹِکی آنکھیں ے کامی کی وادیوں میں کیکر کے کانٹے ہوئی دیکھیں ناز و سنگھار و اداﺅں کی مالکن، شلی جیسی چنچل عورتوں کو یاری کی نیم راہ پہ نمازی بنتے دیکھا ہے ہم ...

Read More »

نظم…. صنوبر سبا

پا بہ زنجیرنہ کر پا بہ زنجیر نہ کرکہ !دل میرا وحشی ہے قدم کہیں پہ ہیں تو من کہیں پہ دل کو قید کروگے تو!محبت کیسے کریگا؟ مجھے پورا کرنا چاہتے ہو یا ادھورا؟کہو! محبت مانگتے ہو یا غلامی؟ محبت میں غلامی کاکیا سوال ! میں نے تمہارے ہاتھ میں ساری کائنات رکھ دی تم خوابوں کا خیالوں کا ...

Read More »

غزل….روبینہ شاد

ادھر دیکھتے ہیں ادھر دیکھتے ہیں تو ہی جلوہ گر ہے ،جدھر دیکھتے ہیں جو چلتے ہیں راہِ وفا پر وہ راہی کہاں کوئی خوف و خطر دیکھتے ہیں بہت یاد آتی ہے تیری ستم گر ستاروں میں جب بھی قمر دیکھتے ہیں نہ پوچھو گزرتی ہے کیا دل پہ اس دم کہیں جو کوئی چشم تر دیکھتے ہیں وئی ...

Read More »

غزل….ذکریا عاجز۔ خاران

چماں شودے شراب لنٹاں تریاک مُشے جیگہ و شبو آں تورے و مزواک مُشے پہ وتی لونڈویں چماں گِرے کنجلے مان شانے منی دیدگاں ہاک مُشے من پہ دستے چلیما مباتاں تئی سورا دز گہارے کائے تمباک مُشے

Read More »

نظم….دانیال طریر

شہر سے کیا گئی جانب دشت زر زندگی فاختہ بین کرنے لگی آ کے شام و سحر ماتمی فاختہ مر گیا رات کو برف اوڑھے ہوئے ایک فٹ پاتھ پر وہ جو کہتا رہا لفظ دو عمر بھر، شانتی، فاختہ کیسی کیسی ہوائیں چلیں باغ میں کون آیا گیا ساری تبدیلیوں سے رہی بے خبر بانوری فاختہ وہ نگر چاند ...

Read More »

سوجا، سوجا ….احفاظ الرحمن

تُو اکیلی ہے بہت ، رنج گر اں بار بہت وقت غم ناک بہت ، رُت بھی شر ربار بہت یادقاتل ہے ، تر ی رُوح بہت گھایل ہے غم سمند ر ہے ، مگر چشم بہ رَہ ساحل ہے کنجِ ہم دم سے اُبھرتے ہیں دل آرام سحاب ہے تر ے واسطے ہر ہاتھ میں خوش آب گلاب رات ...

Read More »

کالک….امداد حسینی

اک کورے کاغذ پر کوڑھی ہاتھ سے لولے لنگڑے حروف لکھ کر اس نے فرمایا: ” اس میں تیرا اور تیری آنے والی نسلوں کا سارا لیکھا چوکھا ہے تیرے حقوق اور فرائض کا حال احوال اس دفتر میں داخل ہے تیری ہر بے نام خوشی کی سڑی ہوئی لاش کاغذ کے اس مفت کفن میں لپٹی ہے تیری مسکراہٹوں ...

Read More »