Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » 2014 » July (page 3)

Monthly Archives: July 2014

شہرِ سدوم کی حسینہ ۔۔۔۔۔ محمود درویش امجد اسلام امجد

تمہارے بدن کے خم و پیچ پر مغفرت کی طرح موت وارد ہوئی کاش میری بھی اس طور موت ہو! تلّذذ کے لمحے میں اے میری جاناں، مری پَر شکستہ، پری چہرہ عورت کاش میری بھی اس طور ہی موت ہو، فنا و بقا کی حدو ں سے اُدھر اک بگولے کے بکھرے ہوئے انت میں ………… ( وہ جو ...

Read More »

نظم ۔۔۔۔۔ دانیال طریر

آتشیں لہر نہ برفاب میں رکھی جائے شب غنودہ مرے اعصاب میں رکھی جائے جس کے کردار پرندوں کی طرح اڑتے ہوں وہ کہانی مرے اسباب میں رکھی جائے غار در غار بھٹکتے ہوئے میں چیخ اٹھا روشنی اب کسی محراب میں رکھی جائے آنکھ لگ جائے تری چاند کی لوری سن کر پھر تری نیند مرے خواب میں رکھی ...

Read More »

غزل ۔۔۔۔۔ توقیر زرمبش۔ خاران

وپائے سراآس گواری زمانگ مہرے طلب ہچ نداری زمانگ جنازہ کہی انت کشیت سوج کنت چِتور مرچاں کنتیں ھشاری زمانگ انگت منارا خطا وار کنت وتا ہچ نہ کنتیں میاری زمانگ زرمبش کجامی تو ذکرا کنے ہزار رنگ ترا پیش داری زمانگ  

Read More »

غزل ۔۔۔۔۔ نثار یوسف

شپاں عمرئے مہشر زرینتہ دلا بہ گِر دردئے ورنائی ئے حاصلا منا زندئے قیدا چہ آزات کنت خُدا عُمرے بکشا منی قاتلا نہ پُجیت ہما پہ سفر زندگ انت ہماپُچ اِتگ کہ نہ زانت منزلا بہ چارزندگی وہد وہدئے سرا زہیرئے زرا چہ غمئے ساحلا  

Read More »

غزل ۔۔۔۔۔ مشتاق احمد

تاریکیوں کو روشنی سے آشنا کریں دیوارِ شب پہ پھر کوئی روشن دیا کریں تخلیق ہو نئی اک محبت کی داستاں زندہ جہاں میں اس طرح رسمِ وفا کریں پھر اک نیا نکھار دیں غنچہ و گل کو ہم پر کیف و عطر بیز چمن کی فضا کریں ابھرے دلوں میں جذبہ تعمیر عہد کو ذہنوں سے اپنے بغض و ...

Read More »

غزل ۔۔۔۔۔ صنوبر سبا

کبھی داغ دل جو دکھا سکے کبھی حال دل جو سنا سکے کوئی اور ہے ،کوئی اور ہے میری طرح کیا وہ منا سکے تیری آنکھ میں کوئی راز ہے تو چھپا اسے جو چھپا سکے تو نے کھیل سمجھا ہوا ہے کیا اسے بھول جا جو بھلا سکے کوئی شمع بن کے جلا ہے تو بجھااسے جو بجھا سکے ...

Read More »

مِزِل ۔۔۔۔۔ عزیز مینگل

گام کہ گام کہ گام نن و دے و شام مِزِل ارے مُر داسکا کسر ارے پُر داسکا چُر و چیل و ڈور آن غلیم آتا ذور آن سنگتاتا گور آن مرام ہفک شاہ دگ اَس داتو ہر ے رُنگ اَس ڈکوک ہرے داٹی خل خل اَڈُنگ اَس ہر فینو نا گندھے کیرغ شاغا نو ہند ئے دُز و ٹیک ...

Read More »

کہانی کا نقطہ ِ انجماد ۔۔۔۔۔ احمد شہر یار

ہوا منجمد ہو مکاں بند ہوجائیں سورج کی کرنیں اداسی بھری گنگ لہریں …….. یہ پایا ب لہریں …….. اگر خاک مردہ میں ڈوبیں …….. اگر ڈوب جائیں…….. تو شاخوں پہ پھولوں پھلوںکی جگہ کونپلوں کی جگہ پھپھوندی نکلتی ہے پھر آہستہ آہستہ خوابیدہ آنکھوں پہ دستک سے بچتے بچاتے خود اپنی ہواﺅں میں گم اور اپنی ہی کرنوں میں، ...

Read More »

دستونک ۔۔۔۔۔۔ حنیف حسرت

دلبئر چیا کِسّہ نہ جنت لوگ ئِ وتئی ڈسّ ئَ نہ دنت گوں سر گُوات ئِ پجی ئَ مسک ءُ ذناں آتار کنت آمیتگ ئِ کوّاس تِراِنت کسّ ئَ سر ءُ سوج ئِ نہ دنت در بُرت تئی مہر ئِ کتاب اشک ئِ منا کہ در پِر اَنت

Read More »