Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی (page 112)

شیرانی رلی

غزل ۔۔۔ ڈاکٹر منیر رئیسانی

بدن پتھر کے یکسر ہوگئے ہیں اندھیرے، آئینہ گر ہوگئے ہیں! پلک جھپکی اندھیروںمیں جنہوں نے گذشتہ میں تصور ہوگئے ہیں نظر بدلی تو اک دم اجنبی سے کئی مانوس منظر ہوگئے ہیں ٹھٹھرتی ساعتوں میں سر کشیدہ کئی شعلے مسخر ہوگئے ہیں تمہاری گفتگو سے آج میرے بہت سے غم م¶خر ہوگئے ہیں بہت خاموش رہنے کے سبب ہم ...

Read More »

غزل ۔۔۔ کرامت بخاری

قریہ معرفت جہاں تک ہے منزلِ عشق بھی وہاں تک ہے دل کی دیوانگی یہ پوچھتی ہے ہوش کی سلطنت کہاں تک ہے صوت کا سلسلہ سماعت تک بات کا ذائقہ زبان تک ہے زیست کی بے کراں مسافت بھی چند لفظوں کی داستاںتک ہے اِک خسارہ ہے کاروبار ِ حیات سود کو واسطہ زیاں تک ہے دل بھی خائف ...

Read More »

آغا گل ۔۔۔ صفدر شاہد۔ راولپنڈی

آغا گل ہیں گُلشن ِبولان کے وہ دِلنشیں جن کے فکرو فن سے ہے تاریخ ہرنائی حسیں خطہ¿ بولان ہی کیا وہ تو سب کی جان ہیں خوشنما قلات کوئٹہ اور چمن کی آن ہیں پشتو، بلوچی ، بروہی ، سب ہیں اُردو کے نقیب پھر بھی آغا گل کے جیسے کم ہیں تازہ کار ادیب یوں رقم ” آکاش ...

Read More »

غزل ۔۔۔ شاہ محمود شکیب

نصیر تہو بہ ئِ تا چینتئے پمیدان ادب تورا شعور قومان دیان لفظ تہے بہ ہر وہد و بہ ہر دورا وتے عمرا بہ گوازینتئے بہ جیل و بندو زنجیران قلم جنگیت تہی ہر وخت گوہر ظلم و گوہر زورا وطنا ءوتی لیلا و قوما زانتگئے شیرین گوہر کو چگ ترا عشق ات گوہر کوہ و گوہر کہورا اگر طوسی ...

Read More »

Shah Inayat of Jhok Sharif … Zarmeena Baloch

It is, sometimes very necessary to raise weapons not as an affront but to celebrate one’s unwillingness to concede before injustice hatred cruelty hunger and exploitation. These days when everyone seeks to hide behind veils of dubious existence. An unsettling fear covers us that silence is something which may add up few morsels limbs years to one’s un-owned life. Shah ...

Read More »

میری ہم دم ۔۔۔ نیلم احمد بشیر

میں نے جب انہیں گھر سے نکالا تو وہ اداس دکھتی تھیں کھوئی کھوئی سی، گمشدہ بے گھری کے خوف سے سہمی ہوئی، مہر بہ لب میری رفیق، میری ہمدم، میری دوست ایک ایک کی رخصتی سمے ، میں نے انہیں دز دیدہ نگاہوں سے دیکھا کئی ایک کو تو میں نے ہاتھ تک نہیں لگایا تھا حالانکہ یہ بات ...

Read More »

کمر جھکا کر چلتا کل ۔۔۔ ثبینہ رفعت

پشاور تیرے پہاڑوں پر میرا غرور قتل ہوا جیون جنگ پر جاتے ہوئے وہ طلبائے علم و ہنر راہِ جستجو میں مار ے گئے انہیں بے خبر مت جانےے وہ سینہ تان کے چلتے تھے اور پشت سے اُ ن پر وار ہوا تیرے پربتوں پہ پشاور اُس دن سے ہمارا مستقبل اب کمر جھکا کر چلتا ہے پشاور تیرے ...

Read More »

غزل ۔۔۔ یوسف یاد

ارسی ترمپے دریائے گریوے مارا بُڈیّنے رپتے ہمایں توچہ ادا چیزے گارانت چمانی روپگ دمبرت پیر زالا موسم تا کاں ریچان انت مہتل تو پہ کئی اوستا؟ وہد کئیا پہ اوشتا تگ؟ دنیا دانکہ مارا زانت حاکے ھوربیت گوں حاکاں یادئے عکسے زاہیر بیت چارے دلئے توآدینکا

Read More »

راہشون ۔۔۔ ڈاکٹر علی دوست بلوچ

گوئزیت امروز ہمک پیما نہ مانیت وھد یک پیما بلے اِ ے دھر چے لوٹیت دُرھا جاور تئی دیما کسے بے مقصد ا زندگ کسے آ منزلئے شوہاز کسے بس لاپ والینیت کسے وَ رُپت و روپا اِنت کسے مرکا بہا زوریت کسے ئَ را کننت بیگواہ کسے ئِ ٹپ و ٹوریں جون کپیت ویرانگاں ڈیھئے مروچی من ہمے پیمیں ...

Read More »

غزل ۔۔۔ امیر خسرو

گفتم کہ روشن از امر، گفتا کہ رخسار منست گفتم کہ شیریں از شکر، گفتا کہ گفتار منست گفتم طریق عاشقان، گفتا وفاداری بود گفتم مکن جورو جفا، گفتا کہ ایں کار منست گفتم کہ مرگ عاشقان ، گفا کہ درد بجر من گفتم کہ علاج زندگی، گفتا کہ دیدار منست گفتم بہاری یا خزاں ، گفتا کہ رشک حسن ...

Read More »