Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » قصہ

قصہ

November, 2021

  • 6 November

    تنہا ۔۔۔ عابد میر

    وشدل نے کالونی کے کتے کو گولی مار دی۔ جس نے بھی یہ بات سنی، انگشت بدنداں ہوا۔ کسی کو یقین نہیں آتا تھا کہ وشدل جیسا دھیمے مزاج کا خوش اخلاق بندہ ایسی قبیح حرکت کر سکتا ہے۔ جس نے کبھی چڑیا نہیں ماری، وہ ایک بے زبان جانور پہ بھلا گولی کیسے چلا سکتاہے؟ بات یقین کرنے جیسی ...

  • 6 November

    دڑد ۔۔۔ مہتاب جکھرانی

    ”داں روش مروشی وہشی او ڈکھانی کئیلوخیں کاسغ و درپ کسا ٹاہث نکثہ۔۔۔۔۔اڑے۔۔۔! اڑے۔۔۔! گل و ڈکھی وثی کیفا شہ درکفنت تہ چھیئے ٹاہنت ناں ں ں۔۔۔۔!!!۔۔انا۔۔انا۔۔۔۔ آں کہ کیفا شہ درکفی گڈ آنہی آ ڈکھے نہ خوشی یے۔۔۔۔!“ اے پرنس روڈا گِتھو لیاقت بازار پلوا سر وثی ٹونکاں کنانا رؤغ اث کہ ناغمانی یک کسائیں چکے آ ایشی شلوارا ...

  • 6 November

    رشیداں اوڈ ۔۔۔ شمیم مری/محمد رفیق مغیری

    مائی رشیداں پورے شہر میں مشہور تھی۔ عورت، مرد، صغیر و کبیر اُدھیڑ بوڑھے، ہندو مسلمان غرض کہ مائی رشیداں کو سب بخوبی جانتے تھے۔ ہر ایک کے پاس شناخت کے اپنے اپنے پیمانے تھے۔ بچوں کے لیے رشیداں تماشہ تھی، تو شادی شدہ عورتوں کے لیے باعث نفرت۔کنواریوں کے لیے اُمید کی کرن اور مردوں کے لیے جنت و ...

  • 6 November

    نجس ۔۔۔ مصباح نوید

    یہ غیرت ہے؟ بے غیرتو!۔ اے ایس آئی کٹکٹاتی آواز میں عمررسیدہ بطخ کی طرح قرقرایا۔قیک قیک کی آواز  ریگ مال کی طرح  بہت سوں کے کانوں میں رگڑ کھاتی،گھومتی،دماغوں میں چھید ڈالتی ہوئی،بے پرواہی سے کھڑے،ہتھکڑیوں میں جکڑے دو جوانوں کے پاس سے ہوا کی طرح گزر گئی پیروں میں قینچی چپلیں، پسینے سے بھیگی سفید داغدار بنیانیں،ٹخنوں سے ...

  • 6 November

    نیک بی بی ۔۔۔ گوہر ملک

    کل ساری رات اُسے نیند نہیں آئی۔ بھیڑوں کے ممیانے سے اُس نے اپنا سر رضائی سے ذرا باہر نکالا۔ خیمے میں اندھیرا تھا مگر اُسے معلوم ہوا کہ صبح کا ذب ہوگئی۔اس نے اپنے سرہانے کے نیچے ہاتھ لگایا، اپنی چادر اٹھالی۔اورسرپہ اوڑھ کر اُٹھ بیٹھی اور ایک لمبی انگڑائی لی۔ گزنامی درخت کی گیلی لکڑیوں کے دھوئیں کی ...

  • 6 November

    محبت کا بٹوارہ ۔۔۔  یاسمین جاگیرانی

    جب تمھارے  اور میرے رشتے پہ نفرت کا بلوہ ہوا تو میری صرف سانسیں رہ گئیں، تم بلوائیوں سے مل گئے تو میں نہ جان پائی کہ تیرے پاس کیا بچا!۔ آج بھی جب میری نظر لوٹ جاتی ہے اس راہ پر تو میں سوچتی ہوں ، میں تو بے خبر تھی اسی لیے لوٹ آ ئی ہوں، تم سب ...

October, 2021

  • 14 October

    بندی گھر ۔۔۔ نعیم آروی 

    وہ میرے دفتر کا پہلا دن تھا۔ حادثہ کچھ اتنا عجیب وغریب اور غیر متوقع تھا کہ میں کچھ دیر کے لیے ششدرہ گیا۔ بات اتنی اہم اور سنگین بھی نہ تھی میں پہلے کچھ سوچ لیتا۔اگر دفتری زندگی کا پہلے سے کچھ تجربہ ہوتا تو شاید بات یوں نہ بگڑتی کہ مجھے گھنٹوں منہ پھاڑے ٹک ٹک دیدم کی ...

  • 14 October

    لیکن۔۔۔رازق ابابکی/ غریب شاہ انجم

      براہوئی ترجمہ ”سردار ہمارا جگر پارہ ہے، اور ہم سردار کے دل میں رہتے ہیں، تم بھی سردار کی قربت حاصل کر سکتے ہو، لیکن……“بڑی مونچھوں والے شخص نے میر بخش کی آنکھوں میں آنکھیں ملاتے ہوئے اپنی بات بس یہیں پر ختم کر دی۔ میر بخش کے ہونٹوں پر کسی سوال کی لرزش تھی، لیکن وہ کچھ نہ ...

  • 14 October

    کام کرو کام ۔۔۔کوثر جمال

    “ہٹے گٹے، ہاتھ پیر سلامت، پھر بھی کام سے جان جاتی ہے، شرم نہیں آتی بیغیرتوں کو ہاتھ پھیلاتے ہوئے” میانے قد اور فربہ جسم کے الحاج ملک عبدالحکیم آج بھی بڑبڑاتے ہوئے گھر میں داخل ہوئے۔ تاہم گھر کے کسی فرد نے ان کی بات پر کچھ زیادہ دھیان نہیں دیا۔ کیونکہ جس طرح انھیں بڑبڑانے کی عادت ہو ...

  • 14 October

    مصنوعی ذہانت کی ذہانت ۔۔۔ نسیم سید

    قریب سہ پہر کا وقت تھا جب اچانک کمپیوٹر سائنس ڈویڑن کا دروازہ کھلا اور ایک لمبا اور قدرے فربہ جسامت کا آدمی، جلدی میں اندر داخل ہوا۔ یہ پروفیسر مارک کنگ تھا جو آج پھر اپنی چابیاں بھول گیا تھا۔ اس  کے ساتھ کام کرنے والوں میں سے بہت سے ساتھیوں نے اسے معمول کے مطابق کمرے، پھر داخلی ...