مضامین

ثمینہ راجہ

(11ستمبر31-1961اکتوبر 2012) ثمینہ راجا کی ، جواں سال موت کی خبر ، بہت تکلیف وہ تھی۔ ہم ایک دوسرے کو جانتے نہ تھے۔ میں نے تو جینوئن شاعرہ کے بطور اس کا نام سن رکھا تھا مگر وہ تو پہلے مجھ سے بالکل ناواقف تھی۔ جینوئن میں نے اُسے سوچ ...

مزید پڑھیں »

ن م دانش

دانش کا تعلق پاکستان میں پروان چڑھنے والی اس نسل سے ہے، کہ جس نے شعور کی پختگی کو ضیا الحق کی آمریت کے دور میں عبور کیا۔ 1977ء میں نافذ ہونے والے مارشل لا کا زمانہ جبر، تشدد اور بندشوں کا تھا۔ جب سرِعام، حق گو صحافیوں کو جرات ...

مزید پڑھیں »

پہ نوک باہندیں نبشتہ کاراں سکین یے

پہ نوک باہندیں نبشتہ کاراں المی اِنت کہ آ وتی ازم ءُ ہُنر ءِ تہا شرّیں وڑے ءَ ایر بہ کپنت۔ پہ اے کار ءَ المی اِنت کہ آ وتی لبزانک ءَ بواننت، آئی ءَ بہ زاننت ءُ نزینک بہ بنت۔ شما گند اِت کہ بازیں نوک باہندیں نبشتہ کار ...

مزید پڑھیں »

محبت کی ثلاثی. ..

محبت کی اس ثلا ثی کو جب جب لکھا جائے گا,وقت کی آنکھوں میں آنسو لہو بنکر رلائیں گے. ..ساحر کیلیے امرتا نے کہا کہ خواب بننے والا جولاہا ہی رہا کسی کا خواب نہ. بن سکا. . انکے جانے کے بعد انکے بچے سگریٹ کے ٹکڑوں سے قرب کشید ...

مزید پڑھیں »

جھوک درگاہ پہ سلامی

شاھ عنائیت شہید جھوک شریف ۔۔۔۔ایک ایسا عظیم زمین زادہ جس نے آج سے چار سو سال پہلے مساوات پر مبنی سماج بنانے کا خواب دیکھا اور پھر ایسا سماج بنانے میں لگ گیا، جھوک میں عام انسانوں کا ایک مثالی گاوں بس گیا جہان سب مل جل کر کھیتی ...

مزید پڑھیں »

کاکیشین حکایات اور رسول حمزہ توف

الاوٗ کے پاس بیٹھے ابو طالب نے قصہ شروع کیا ؛ کاکیشیا کی ایک ریاست میں شاعروں کی بہتات تھی ۔ یہ بستی بستی گھومتے اور اپنے گیت سناتے ، کسی کے ہاتھ میں ‘ پاندور ‘ ہوتا ، کسی کے ہاتھ میں ‘ طنبورہ ‘ ، کسی کے پاس ...

مزید پڑھیں »

ہڑپہ

ہڑپہ کے آثارِ قدیمہ بہت مشہور ہیں۔ آثار قدیمہ (آرکیالوجیکل سائیٹ)کو بلوچی میں ”دَمب“ کہتے ہیں۔میں حیرت سے دیکھ رہا تھا کہ ہڑپہ کا دمب کئی میل پر پھیلا ہوا ہے۔ظاہر ہے کہ سارے رقبے کی کھدائی توبہت پیسہ اور بہت مہارت مانگتی ہے۔ اس لیے اِن آثار کی صرف ...

مزید پڑھیں »

جمہوریت کی تحریک

یہ ایک قسم کی انقلابی نرگسیت ہے کہ اگر سماج کے مختلف طبقے اور پرتیں بعض جمہوری مطالبات پر متفق ہوں تو انہیں سیاسی اور تنظیمی طور پر بھی "یکساں” سمجھنا شروع کردیا جائے۔ عمومی جمہوری سیاسی تحریک میں مجموعی سیاسی قوتوں کے درمیان کوئی "دیوارِ چین” حائل نہیں ہوتی۔ ...

مزید پڑھیں »

ترقی پسند فکر اور عصری تناظر ( ادیبوں کی ایک کانفرنس کے لیے لکھا گیا)

پیر کی ہمیشہ کوشش رہتی ہے کہ اس کا خلیفہ بھوکا، ننگا، اور تنگ دست رہے ۔ تاکہ وہ اُس کی روحانی محتاجی اور جسمانی چاکری میں ہی لگا رہے ۔ اور ہر نئے پرتجسس دکھ میں مزید خلوص سے اُسے مدد کو پکارتا رہے۔ سلسلہ دکھوں اور دعاؤں کا ...

مزید پڑھیں »

محکوم طبقات کی دانشور: عابدرہ رحمن شاہ محمد مر

ہمارا معاشی، سیاسی اور سماجی نظام فیوڈل اور پسماندہ ہے۔ ایسا نظام جو کہ سرکار، سردار اور خود سماج کی طرف سے بندشوں، پابندیوں اور سختیوں کے سیمنٹی چھلکوں میں لپٹا نظام ہے۔اس کی ایک ہی بنیادی خاصیت ہوتی ہے۔ وہ یہ کہ اس کا ہر لمحہ شعورو تفکر کادم ...

مزید پڑھیں »