ماہانہ محفوظ شدہ تحاریر : نومبر 2020

فہمیدہ ریاض: فرخزاد سے شہرزاد تک

ساٹھ کی دہائی میں اپنی اثر انگیز تانیثی شاعری کے لئے معروف ایرانی خاتون شاعر فروغ فرخزاد کی زندگی کا چراغ گل ہوا، جب وہ تینتیس برس کی عمر میں ایک ٹریفک حادثے میں انتقال کر گئیں، لیکن اپنی مختصر عمر میں انہوں نے شعر و ادب کی تانیثی روایت ...

مزید پڑھیں »

محبت فروش

  اے ذ ینیی۔۔۔ اے ذ ینیی۔۔۔۔ زنیرہ زنیرہ۔۔۔۔۔۔۔۔ امی کی ساری تلملاہٹ میرا نام پکارنے میں ہی سمٹ آتی ہے۔ جی امی۔۔۔۔۔۔ آتی ہوں۔۔۔۔رَرا ٹی وی۔ کی آواز مدہم کر دے۔ تیرے ابا اونگھنے لگ گئے ہیں۔ کچن کا بلب جلتا ہی رہنے دو۔ اماں کچن کے کیڑے مکوڑے ...

مزید پڑھیں »

محبت فروش

  اے ذ ینیی۔۔۔ اے ذ ینیی۔۔۔۔ زنیرہ زنیرہ۔۔۔۔۔۔۔۔ امی کی ساری تلملاہٹ میرا نام پکارنے میں ہی سمٹ آتی ہے۔ جی امی۔۔۔۔۔۔ آتی ہوں۔۔۔۔رَرا ٹی وی۔ کی آواز مدہم کر دے۔ تیرے ابا اونگھنے لگ گئے ہیں۔ کچن کا بلب جلتا ہی رہنے دو۔ اماں کچن کے کیڑے مکوڑے ...

مزید پڑھیں »

فہمیدہ ریاض

تاریخ کی خونی گلی تھی، اور فہمیدہ ریاض ٹارچر سیلوں میں تھے کڑیل جوان گمشدہ جن کی جوانی گمشدہ تاریخ کی خونی گلی تھی اور فہمہدہ ریاض عورتیں سنگسار تھیں اورُگناہگارُمحبت آدمی اورانکاری جبیں انسان کی وقت کے سارے خدائوں کے قہر کے سامنے سینہ سپر ایک فہمیدہ ریا ض۔ ...

مزید پڑھیں »

آل انڈیا بلوچ کانفرنس

1932میں یوسف کے والد کیسر خان کو سیاسی وجوہات کی بنا پر سرداری سے معزول کر کے ملتان بدر کیا گیا اور اُس کی جگہ اس کا بڑا بیٹا گل محمد سردار بناتھا۔ شاعر گل محمد بیما راور نا اہلی کی حد تک لاپرواہ ثابت ہوا۔ اُس سے سرداری نہ ...

مزید پڑھیں »

مٹی سے

احمد شہریار مٹی سے اے ری مٹی تو کیوں جلتی آگ اگلتی، روتی روکر چشمہ ہوتی اڑتی آگے بڑھتی، مڑتی رہتی ہے!۔ ایسا مت کر میری مٹی!۔ اے ری مٹی!۔ آگ تجھے کندن کردے گی لہر تجھے روشن کردے گی تجھ پر بیٹھی دھول اڑا کر تیز ہوا تجھ کو ...

مزید پڑھیں »

سٹرائیک

  نیپلز میں ٹرام کے ملازمین نے سٹرائک کر رکھی تھی۔ ”ریویرادیؔ کیا یا“کے ایک سرے سے دوسرے سرے تک خالی ٹراموں کی ایک قطار لگی ہوئی تھی اور کنڈکٹروں اور ڈرائیوروں کی۔۔ ان زندہ دل، باتونی اور پارے کی طرح بے تاب اور پھر تیلے نیپلزیوں کی ایک بڑی ...

مزید پڑھیں »

کیا کیا جائے

     لینن کی لکھی کتاب”کی کیاجائے؟“سمجھیے20ویں صدی کی سیاسی کلاسیک ہے۔لوئی فشر نے اس اہم کتاب کو کمیونسٹ تنظیم کاروں یعنی آرگنائزیشن کرنے والوں کا ”بائبل“کہاتھا(1)۔لینن نے یہ کتاب اپریل1901 سے فروری 1902 کے درمیان لکھی۔اوریہ مارچ 1902میں چھپ گئی۔اس کاپورا نام تھا: ”کیا کیا جائے؟ ہماری تحریک کے ...

مزید پڑھیں »

ہفت روزہ عوامی جمہوریت

چھ مئی 1972کا عوامی جمہوریت سرا سر جشن و تہوار کے موڈ میں تھا۔ بھر پور مسرت اور جذبے میں۔اور اُس کی وجہ بھی خود ہی اپنے اوپننگ فقرے میں بتائی:”پاکستان میں گذشتہ 25برسوں سے مزدور ہر سال یوم مئی مناتے ہیں۔ لیکن اس سال حکومت نے یکم مئی کو ...

مزید پڑھیں »