*

 

اش مئیں مُرتئی آ رَندا، کوکھر پھذا نہ گُوارنت

کو کھر ضرور گُوارنت، مئیں چھم پھذا نہ گُوارنت

اش بندو بُرّ بس بنت، جُڑ بستغ ایں غمانی

پونچھا رغام زیری، سر گوار پھذا گُوارنت

گردی سرے نہ زِیری، فتہ ئے دڑو شورش

دڑد نخنت دفن گاہ ہنگر پھذا نہ گوارنت

تھئی نام مئیں کتاوانی نیاما مہ شاہدی داث

سیاہی قلم سُنٹا شہ، بنت اَکھّر پھذا نہ گوارنت

من زیرے خاک مندوستؔ، دفن گاہ ر وَث دفن بیث

پھڑ تہ چھذغ ایں گالانی، گوہر پھذا نہ گُوارنت

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*