Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » پوھوزانت » گُل خان نصیر ئِ یاتگیری آَ۔۔۔۔۔۔۔زاہدہ رئیس راجی

گُل خان نصیر ئِ یاتگیری آَ۔۔۔۔۔۔۔زاہدہ رئیس راجی

میر گُل خان نصیر وتی سدی ئِ ھما شائر، ندکار، اھوالکار، محقق، مورخ ئُ سیاستدان انت کہ آئی ئِ حکمت ئُ بصیرت آئی ئِ زندئِ ھمک پگر، کرد ئ
ُ جہدے ئِ تہ ئَ پدر انت۔
14 مئی 1914 ئَ نوشکی ئِ دمگ ” کلی مینگل “ ئَ ودی بئیوکیں میر گُل خان نصیر ئِ مات پت ئَ آئی ئِ نام گُل خان ایر کُتگ ئُ آئیئِ جند ئَ وتی گُل نام (تخلص ) نصیر ایر کُت ۔
”نصیر“ گُل نام(تخلص) ایر کنگ ئِ پُژدر ئِ باروا گوشگ بیت کہ واجہ ئَ گوں میر نصیر خان نوری ئَ روحانی مہر ئُ نزیکی یے بیتگ۔ میر نصیر خان نوری ؛ اولی بلوچ بادشاھے بوتگ کہ آئی ئَ وتی دَور ئَ باقاعدہ حکومت کُتگ ئُ آئی ئِ مستری (حکمرانی) چہ بندرعباس ئَ بگر تاں ملتان ئُ کراچی ئُ جیکب آباد ئِ دمگاں بوتگ کہ پیسرا اے سرجمیں جاہ بلوچستان بوتگ ۔
میر گُل خان نصیر ئِ آریپیں پت ئِ نام میر حبیب خان مینگل ئُ بانکیں مات ئِ نام بی بی حوراں بادینی بوتگ۔ آ وتی پنچ برات ئُ سے گہارانی توکا، بزاں چہ ھشتیں چکاںھپتمی نمبرے چُک بوتگ۔ بلے براتانی توکا آئی ئِ نمبر چارمی ات۔
بیست ئُ دو سال ئِ عُمر ئَ آئی ئِ سُور گوں میر بوھیر خان گچکی ئِ جنیں چُک ئُ میر شھداد گچکی ئِ نماسگ زبیدہ بی بی ئَ بوت کہ ھودئَ سانگ کنگ ئ
َ آئی ئِ وتی جند ئِ دلمانگی گون بوتگ۔
میرگُل خان نصیرئِ دو جنیں چُک بوتگ انت۔ گوھر ملک ئُ گُل بانو۔ گوھر ملک ئَ وھدے چہ اُردی ئَ پولیو ئِ نادراھی ئَ لنگ کُت گُڑا پت ئِ دوستیگیں چُک ھمیں بوت۔ رندتر ئَ گوھر ملک ئَ وتی ھم جتائیں پجارے ماں بلوچی لبزانک ئِ آزمانکاری ئِ پڑا ایر کُت۔
گُل بانو ئِ باروا ئَ پٹ ئُ پول کنگ ئَ مالوم بیت کہ آئی ئَ چہ دگہ نامے ئَ رجانک ئِ کار دیما بُرتگ بلے آ نامے کہ گوھر ملک ئَ رسئیت گُل بانو ئ
َ نہ رسئیت۔ آ زمانگ ئَ میرگُل خان نصیر ئِ مستریں برات میر لونگ خان ؛ جنیکانی وانینگ ئِ سک ھلاپ بوتگ پرچا کہ آزمانگ ئَ ھم انگریزاں پہ بلوچانی پُشتہ بازیں پندل سازیتگ اتنت۔ بلے میر گُل خان نصیر ئَ وتی دوئیں جنیں چُک وت لوگ ئَ وانینت انت۔

میر گُل خان نصیر ئَ بید چہ دو جنیں چکاں ، مردیں چُک نہ بوئگ ئِ ھجبر گم نہ بوتگ۔ وھدے لہتے نزیکیں مردماں آئی ئَ سکین دات کہ آ دومی سور بہ کنت تاں آئی ئَ مردیں چُکے بہ بیت گُڑا آئی ئَ وش نہ بوت ئُ ھمیں پسّوے دات کہ بلوچانی آ درائیں مردیں چُک کہ منی شاعری ئَ وان انت ئُ منی جہد ئَ سرپد بنت آ منی مردیں چُک انت۔
میر گُل خان نصیر ئِ شاعری ئِ بابت ئَ آئی ئِ مات ئَ گوشتگ کہ آئی ئَ چہ درکسانی ئَ شعر دپگال کنگ ئِ ھیل بوتگ چُش کہ یک برے آئی ئ
ِ مات ئَ پہ وتی لوگ ئِ پراشی (دری ) اڈ کنگ ئَ یک تاجی نامی جنینے توار جت ئُ آئی ئَ کمے ناھے دات گُڑا اے وھد ئَ میر گُل خان نصیر کہ عمری نُوکی پنچ سال ات اُشتوک بوتگ آئی ئَ دپگال کُت:
بلہ تاجی ہرف دانا باجی
بزاں ” بُزور وتی باجی نانی تاجی “
ھمیں داب ئَ یک برے آھانی لوگ ئَ کارکنوکے جنین ماہو ئَ گُل خان ئِ مات ئَ چار سالمیں ئُ یک کپی ایں نگنے چست کُت دات۔ گُل خان ئَ گوں وش تبی ئَ گوشت:
چارچپٹی کپ تل ٹی ایتہ ماہو نہ بغل ٹی
بزاں ” چار نگنانی تلا ، کپی ایں نگن بدئے ماہو ئِ بگل ئَ “
(حوالہ : ورثہ ۔ نصیریات۔ عبدالصبور)
اے ھما زمانگ بوتگ کہ چُکاں وتی ھچ سُد ئُ سما نہ بیتیں ئُ ھرچے دلے لوٹیت یا دیمے مردمے بہ کنت آ گیگان گرانت۔
بلے میر گُل خان نصیر ئِ چہ درکسانی ئَ وتی ھند ئُ دمگ ئَ بہ گر تاں میان اوستمانی اڑ ئُ جنجالانی چارگ ئِ موہ رسئیتگ چُش کہ پہ وانگ ئَ چہ نوشکی ئ
َ درکپگ ئُ شال ئَ سربوئگ ئُ پدا چہ شال ئَ در کپگ ئُ لاھور ئَ سر بوئگ، اے سپر ئَ آئی ئِ پگر ئُ مارشتانی تہ ئَ پرائی ئُ جُہلانکی یے بازیں درپچ کنان کُت انت۔
آئی ئَ وتی ملک ئِ سرا زوراکانی زلم ئُ ناانساپی سک ت¶رینتگ پمشکا آئی ئَ اے زلم ئُ زوراکی ئِ ھلاپ ئَ اولی توار گوں وتی شاعری ئَ چست کُتگ ئُ رند ئَ سیاسی جہدے دیما بُرتگ۔
کوہنگ ئِ اے کوہیں کلات
کسّی پتئِ میراس نہ انت
آئی ئِ وتی جند ستر میر ئُ سردارے بوتگ بلے آئی ئَ ھجبر سردار ئُ میرانی بدیں کارانی ھمراہداری نہ کُتگ ئُ وتی ھما بلوچ کہ بزگ ئُ وار بوتگ انت آھانی توار بوتگ ئُ آھاں وتی پجار ئُ ھک ئِ پچ گرگ ئِ سکین دئیگ ئَ چہ درستاں دیم ئَ تر بوتگ چُش کہ
ما گریبوں نان لوٹوں نئیکہ پ¶ج ئُ توپ و بم
ماگریبوں پُچ لوٹوں ، نئیکہ دربار و حشم
ما گریبوں، یک گِدانے کوہ و دشتانی تہ ئ
َنئیکہ ماڑی و مَھل، نئے سبزگ و باگ و اِرَم
وتی راج ئِ آ درائیں ورنا کہ پہ ماتیں وتن ئِ آزاتی ئُ وشحالی جہد کنگ ئَ اتنت آھانی دلبڈی دئیگ ئُ روژنائیں باندات ئِ کلوہ دئیگ ئَ گُل خان گوشیت :
قدم قدم رواں ببئے
دلیر ئُ پہلوان ببئے
پہ شان ِ مادر وطن
فدا گوں جسم ئُ جاں ببئے
پہ نام ئُ ننگ ئُ آبرو
سراں وتی دیاں ببئے
گلامی ئَ چے درکپئے
قدم قدم رواں ببئے
وھدے وتی ماتیں وتن ئِ سرا قبضہ گیرانی ھلاپ ئَ گوں راجی جہدکاراں ھمتوار بوت گُڑا چُش گوشتگ:
بچنڈیت بیرک اِت برز ئَ
سلیماں کوہ تاں البرز ئَ
بلوچ یک بنت شکر لبزیں
چہ یلمند داں زر ئَ سبزیں
میر گُل خان نصیر ئِ عشق مجازی آئی ئِ ماتیں وتن بوتگ پرچا کہ آئی ئَ وتی زند ئِ ھمراہ وتی تب ئِ انسانے رسئیتگ ئُ دل ئِ دنیا ئِے اے درگت ئ
َ ایمن ات بلے اے دگہ شائرانی رنگ ئَ آئی ئَ وتی مہر رسگ ئَ پد شائری پہکا یلا نہ کُت پرچا کہ آئی ئِ مہرئِ پہنات سک پراہ ئُ شاھگان ات۔ آئی ئَ گوں وتی زمین ، وتی ملک ، وتی مردم ئُ وتی زبان انچش مہرئُ دوستی ات کہ چہ دمانے ئَ ھم ایشاں بے سما نہ بوتگ۔
بیا او مرید، بیا اومرید، بیا او مرید دیوانگیں
بیابیا کہ دیوانے کنوں ، مالانگ و مستانگیں
سوتکگ ترا عشق ئِ زراب، مارا غماں کرتگ کباب
تو ھانل ئِ درداں زرئے، ما پہ وطن جانانگیں
چاکر تئی دوست ئَ پُلیت، چما دگہ ڈنگاں وطن
تو سرپہ شیدائی شُت ئے، ما پیھناں زنداگیں
مئے بند و بنداں سوھتگنت ، جوریں بدان مستانگیں
توزرتہ کچکول و عصا ، کوڑیں جھان داتگ یلہ
درکپتگوں سربازی ئَ ، ما پہ پڑا مردانگیں
فرق ھچ نہ اِنت میگ و تئی ، درد ئَ و زرد ئِ آچش ئَ
تو ھانل ئِ عشق ئَ گنوک ، ما پہ وطن دیوانگیں
ماں شیئرو عشق ئِ دپتراں، دانکہ جھان ھست انت توئے
ماھم جھان ئَ یات بوں ، مں مجلساں پروانگیں
پُلیّں مرید، پُلیّں مرید، بیا گوں فقیری باطن ئَ
گوشدار شیئراں شکّلیں ، گوشتگ نصیر دیر زانگیں
میر گُل خان نصیر اگاں سرداری نظام ئِ ھلاپ بوتگ گُڑا آ مردماں کہ بلوچانی توکا ناتپاکیئِ توم کشگ ئِ کارکُتگ آھانی ھم سک ھلاپ بوتگ۔ آئی ئَ زانتگ کہ تاں من ایشانی دروگ ئَ پاشک مہ کناں وتی راج ئَ تپاکی ئِ راہ ئَ روان کُت نہ کناں۔ وتی کتاب ”کوچ و بلوچ“ کہ لانگ ورتھ ڈیمز ئِ پٹ ئُ پولی تاریخی کتاب ئِ رجانک انت۔ گُل خان ئَ جہد کُتگ کہ آئی ئِ ھمک دروگیں ئُ وت ساچتگیں روایاتانی باروا وتی وانوک ئَ راستیں سرپدی یے بہ دنت۔ پمشکا گوں رجانک ئَ ابید آئی ئَ حاشیہ ئِ توکا دروگیں گپانی تچکیں وضاحت ھم نبشتہ کُتگ۔
اے کتاب ئِ توکا نبشتہ کار ئَ بلوچ ئُ براھوئی دوجتائیں کوم گوشتگ ئُ اے بلوچ راج ئِ پروش دئیگ ئَ مزنیں کردے جوڑ بوتگ بلے گُل خان ئَ وتی زمانگ ئَ ایشانی اے دروگ ئُ پلینڈی پاشک کُت انت۔
میر گُل خان نصیر ئَ بازیں دراجیں لچہ ھم پربستگ انت چُش کہ دوستین ئُ شیرین، داستان ِ حمّل و جیہند، ھپت ھیکل ئُ اے سہیں جتا جتا کتابانی توکا چاپ ئُ± شنگ ھم بوتگ انت۔
”ھپت ھیکل“ نواب نوروز خان ئُ آئی ئِ ھپت سنگتانی سرگوست ئِ راستیں کسّہ انت۔ پرچاکہ 1968 ئَ نوروز خان ئُ آئی ئِ سنگت زندان ئَ ھما جاہ ئَ بندیگ بوتگ انت کہ میر گُل خان نصیر وت ھم گوں آھاں زندان ئَ بوتگ ئُ سرجمیں کسّہ گوں گُ±ل خان ئَ آ سرمچارانی وتی جند ئَ گوشتگ انت۔ اے لچہ ءدروشم ئَ پربستگیں نواب نوروزخان ئِ سنگتانی داستان بلوچانی بزگی ئِ یک پچیں راجدتپر انت کہ اگاں گُل خان ئَ نبشتہ مہ کُتیں مروچیں بازیں راستیانی رنگہ گار بوتگ ات۔
میر غوث بخش بزنجو کہ چہ آئی ئِ نزیکیں دوستاں یکے ات ۔ میر گُل خان نصیر ئِ بابت ئَ یک برے گوشیت :
” میر گُل خان نصیر ئِ شائری، سیاسی شائری یے ات۔ آمدام تیار ات وھدے آئی ئِ سرا شعر گوشگ ئِ دورہ کپتگ ۔ تو آدراں قید ئُ بند ئَ چہ آزات بوت۔ گُل خان ئِ شائری ئِ تہا، فردوس ئِ وڑا روانی است ئُ دومی نیمگ ئَ اقبال ئِ رنگ ئُ دروشم ہم رسیت۔ آئی ئِ گُل ئُ بلبل ئِ شائری ھم کُرتگ۔ بلے آئی ئِ شائری ئِ گیشتر پکر ئُ دروشم قوم ئِ آزاتی ، وت واجہی، ئُ بلوچستان ئِ اولس ئُ وشحالی گندگ ئَ بیت۔ “

میر گُل خان نصیر ئِ ماتی زبان وَ بلوچی بیتگ بلے براہوئی، پشتو، فارسی، اردو ئُ انگریزی زبانانی سرا ھم دسترس بوتگ۔ بنداتی دور ئَ گُل خان ئِ ھیال ئُ مارشتانی درانگازی ئِ زبان ھمابوتگ کہ آئی ئِ چاگرد ئَ زوراک تر بوتگ بلے وھدے چارسدہ ئِ مراگش ئَ آ توار کنگ بوت ئُ اودئ
َ بہر زوروکیں ھمک شائر ئَ وتی وتی ماتی زبانانی توکا وتی پربند ونت انت گُڑا میر گُل خان نصیرئَ احساس بوت کہ آئی ئَ پرچیا بلوچی ئَ شعر پرنبستگ۔ اے مراگش ئِ اولی بہر ھلاس بوئگ ئَ رند گُل خانئَ وتا یک کرّے ئَ بُرت ئُ وتی اولی دراجیں بلوچی لچہ ”بیا او بلوچ“ نبشتہ کُت ئُ رند ئَ دیوان ئَ ونت۔ چہ اے روچ ئَ پد گُل خان نصیر ئَ وتی دلگوش گیشتر بلوچی زبان ئِ نیمگ ئَ نبشتہ کنگ ئَ دات۔
میر گُل خان نصیرئِ توکا پرچا کہ سیاسی بود ئُ چاگردئِ سرپدی گیشتر بوتگ پمشکا آئی ئَ وتی کلم ھرداب ئَ کہ بلوچاں نپے بہ رسیت کارمرز کُت۔ نوائے بلوچستان ئِ شونکاری ئِ بابت ئَ عبداللہ جان جمالدینی وتی یک نبشتانکے تہ ئَ گوشیت:
”میر گُل خان نصیر ئِ پکر پدّر ات کہ آئی ئَ نوائے بلوچستان ئِ شونکاری پہ اے ھاترا قبول کرتگ ات کہ میر نبی بخش زہری مزنیں زردارئُ کارجاہ دارے ات ئُ نہ آئرئَ چریشی روزگارے رستگ ات ۔ آوتی درائیں سنچ ئُ لائقی ئَ را مہلوک ئِ ھزمت ئَ گوازینگ ئِ جزم کُرتگ ات ۔ اخبار ئَ وتی مول ئُ مراد آئی ئِ خاصیں ذریعہ ئِ سرپد بوت ھمے ھاترا آئی ئَ نوائے بلوچستان ئِ شونکاری ئُ ادارت کُرت۔ “
(حوالہ : میر گُل خان نصیر ۔۔۔ احوال کار ۔ نبشتہ کار عبداللہ جمالدینی ۔ بلوچی ترینوک : یار جان بادینی۔ تاکدیم 10 )

میر گُل خان نصیر ئِ نبشتہ کُتگیں لہتے کتاب ایش انت کہ گیشتریں نام من ئَ چہ ڈاکٹر عبدالصبور ئِ پٹ ئُ پولی دپتر ورثہ (نصریات )ئَ دست کپتگ انت۔
۱۔ تاریخ بلوچ و بلوچستان ،کوئٹہ،بلوچی اکیڈمی،1993ئ، ص
۲۔ کوچ و بلوچ ،کوئٹہ،قلات پبلشرز،1983ئ، ص
۳۔استونا بندغ ،کوئٹہ،براہوئی ادبی سوسائٹی،1987ئ، ص
۴۔ بلوچستان کے سرحدی چھاپہ مار۔ مترجم
۵۔ تاریخ خوانین ِ قلات1982) (
۶۔سیناءئِ کیچگ ئَ ، (سروادی سینا ئِ منظوم بلوچی ترجمہ)
۷۔گلبانگ
۸۔گروگ
۹۔مشہد نا جنگ نامہ (1981)
۰۱۔گرئند
۱۱۔ حون ئِ گوانک
۲۱۔ گ±لگال
۳۱۔ ھپت ھیکل
۴۱۔ دوستین ئُ شیرین
۵۱۔حمّل ئُ جیہند
۶۱۔ بلوچستان کی کہانی شاعروں کی زبانی
۷۱۔ بلوچی رزمیہ شاعری(مئی ۹۷۹۱ئ)
۸۱۔ بلوچی عشقیہ شاعری
میر گُل خان نصیر ئَ وتی سرجمیں زند پہ راجی جہد ئَ گوازینان کُت ئُ 6 دسمبر 1983 ئَ سے شنبہ ئِ روچ ئَ ماں کراچی شہر ئَ اے دنیا یلا دات ۔

Check Also

jan-17-front-small-title

شاہ لطیف،صوفی نہیں، یوٹوپیائی فلاسفر ۔۔۔ شاہ محمد مری

اچھے لوگ انہیں سمجھاتے رہے کہ انہیں اس سے کوئی فائدہ نہیں ہوگا ۔ کسی ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *