Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » نظم ۔۔۔ عاجز جمالی

نظم ۔۔۔ عاجز جمالی

میرے شہر کا
عالمی ادبی میلہ
فیشن شو کی طرح دکھتا ہے
کتابیں رقص کرتی ہیں
اور علم و دانش بکتا ہے۔
امیرِ شہر ناپ تول کر
کتابوں کی بوریاں بھر کر
گاڑیوں کی ڈگی میں ڈال کر
گھر کے لیے ردی جمع کرتا ہے۔

اور میرے شہر کا
مفلس لکھاری
فیس بک پر سیلفی سجا کر
عالمی ادب کا حصہ بنتا ہے

Check Also

March-17 sangat front small title

نظم ۔۔۔ زہرا بختیاری نژاد/احمد شہریار

میں جبراً تم سے نفرت کروں گی تمہارے عشق سے میری زندگی کے حصے بخرے ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *