Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » نظم ۔۔۔ شمامہ افق

نظم ۔۔۔ شمامہ افق

“بہت کٹھن ہے”

وفا کے رستوں سے خار چننا
یا خواب بْننا۔۔
بہار موسم میں ذرد پتوں کی دوستی میں وجود کی کونپلیں کھرچنا۔۔۔
نئے زمانے کی جرسیوں میں پرانی سردی سے لڑتے رہنا
جلن چھپانا , ہنسی دکھانا۔۔۔
بہت کٹھن ہے۔۔
بہت کٹھن ہے ہواؤں کی سازشیں سمجھنا۔۔ مگر انہی سے ہی چوٹ کھانا۔۔
پرائی آنکھوں میں اپنے خوابوں کی بے بسی پہ ہنسی اڑانا۔۔
بہت کٹھن ہے
خمیدہ کندھوں پہ بوجھ ہونا
سروں میں چاندی سیاہ کرنا
خلافِ فطرت نبھاہ کرنا۔۔
گھسی پٹی سی پرانی پگڑی کو آنسوؤں سے بھگو کہ اجلا بناتے رہنا
اور اک تفاخر سے ایک وحشی کو ہی مجازی خدا بتانا۔۔
بہت کٹھن ہے

Check Also

jan-17-front-small-title

گوادر کے مچھیرے  ۔۔۔ سلمیٰ جیلانی

کبھی ہم مچھیرے تھے جال میں پھنسی چھوٹی مچھلیاں پانی میں واپس پھینک ان کے ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *