Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » مزدور ۔۔۔ الحاج یوسف اسمعیل

مزدور ۔۔۔ الحاج یوسف اسمعیل

مجھے مزور کہتے ہیں تلاش زر میں رہتا ہوں
نئے منظر بناتاہوں پس منظر میں رہتا ہوں
میری مجبوریاں مجھ کو کبھی تھکنے نہیں دیتیں
مگر پھر بھی میں حاضروقت کی ٹھوکر میں رہتا ہوں
بہت ہی مختصر روزی میں ہوتا ہے گزر میرا
میں گُھٹنے موڑ لیتا ہوں مگر چادر میں رہتا ہوں
جومستقبل میرے بچوں کا سوچوں تھرتھراتا ہوں
میں زندہ ہوں مگر ہر وقت ہی محشرمیں رہتا ہوں
بہت کم کام ہوتا ہے میرا ساون کے موسم میں
ٹپکتی چھت بھگو دیتی ہے جب میں گھر میں رہتا ہوں
پسینہ بیچ کر اپناعلاجِ ذات کرتا ہوں
ہے جس پر دھوپ کی چھت میں اُسی دفتر میں رہتا ہوں
میرے بالوں کی چاندی پاؤں کی بیڑی نہیں بنتی
میں یوسفؔ خواب ہوں تعبیر کے محور میں رہتا ہوں

Check Also

March-17 sangat front small title

نظم ۔۔۔ زہرا بختیاری نژاد/احمد شہریار

میں جبراً تم سے نفرت کروں گی تمہارے عشق سے میری زندگی کے حصے بخرے ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *