Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » لوہا ہمارے لہو میں گُھلا ۔۔۔ کاوش عباسی

لوہا ہمارے لہو میں گُھلا ۔۔۔ کاوش عباسی

ہم آج کی زندگی ہارے
لوہا ہمارے لہو میں گُھلا
ہڈیوں میں جلی آگ
اور گوشت میں شیرچیتے پکارے

بڑے جنگیوں، لارڈوں ، سفاک اخلاقیوں نے
تھمائی ہمیں
آگ اور خون اور گوشت کی جنگی تلوار
نفرت، عداوت ، شقاوت کی للکار

اب زندگی ہم ہیں
اور زندہ رہنے کا سچ اور حق ہم ہیں
اور دیگراں کشتنی ہیں
ہم اب کشت و خوں کے سوا جانتے کچھ نہیں

حسن ، رنگ اور خوبی
محبت ، دل اور نرمی کو
جنگ اور سختی سے کاٹ ہی ڈالنے،
آگ میں بُھون ہی ڈالنے کے سوامانتے کچھ نہیں
کیا کہیںکوئی ہے
آج کا آدمی
حسن ، رنگ اور خوبی
محبت، دل اور نرمی کا آدمی
جو ہمارے ہی لوہے کے دل
اور لوہے کے ہاتھوں سے
ہم کو ،جہاں کو بچالے
ہمیں آج کا آدمی پھر بنائے۔

Check Also

March-17 sangat front small title

نظم ۔۔۔ زہرا بختیاری نژاد/احمد شہریار

میں جبراً تم سے نفرت کروں گی تمہارے عشق سے میری زندگی کے حصے بخرے ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *