Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » غزل ۔۔۔۔۔۔ اکرم خاور

غزل ۔۔۔۔۔۔ اکرم خاور

روشنی گر نہ دی ستاروں نے تیری خاطر میں چھین لاﺅں گا
یاد تیری کبھی جو آئی تو اپنی دنیا کو بھول جاﺅں گا

بن تیرے پھول بھی نہیں کھلتے خوشبو ملتی نہیں ہے گلشن کو
تیری جھولی میں خوشیاں بھرنے کو اپنی خوشیوں کو میں لٹاﺅں گا

تجھ سے ملنا تھا اپنی قسمت میں ورنہ کتنی بڑی ہے یہ دنیا
اپنا احساس تجھ کو دے کر میں تیری خوشیوں کو یوں چراﺅں گا

جانے کب تک رہے گا ساتھ تیرا اور کتنا سفر ا بھی باقی
ختم کرکے یہ ساری بے رحمی ایک لمبے سفر کو پاﺅ ں گا

کتنی مدت یہاں رہا جیتا کچھ نہ پایا سوائے نفرت کے
آج پہنچا ہے حکم تنہائی آج خالق کو کیا دکھاﺅں گا

Check Also

jan-17-front-small-title

گوادر کے مچھیرے  ۔۔۔ سلمیٰ جیلانی

کبھی ہم مچھیرے تھے جال میں پھنسی چھوٹی مچھلیاں پانی میں واپس پھینک ان کے ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *