Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » عذابِ دید ۔۔۔ عاصمہ طاہر

عذابِ دید ۔۔۔ عاصمہ طاہر

میں کیسے بھولوں، وہ خوبصورت سی، چاکلیٹی سی شام کوئی
بدن تمھارا کہ خوشبو ئیں لہلہا رہی تھیں
تمہاری آنکھوں سے عکس کوئی جھلک رہا تھا
وہ جس میں وادی کا سبز منظر چمک رہا تھا
تمھارے ہونٹوں میں قہقہوں کے حسین موتی دمک رہے تھے
وہ شام تو روشنی کے رازوں سے یوں بھری تھی
کہ جیسے منظر مہک رہا ہو
وہ خوبصورت سی رہگزر کی حسین پینٹنگ
خوش آمدید ہم کوکہہ رہی تھی
کہ حیرتی آنکھ دیکھتی تھی
ہمارے ہاتھوں کی سب لکیروں میں
کہکشاؤں سے راستوں کے نشاں بنے تھے
چہار جانب ہی آئینوں میں تھا رقصِ حیرت
وہیں کہیں بے وجود سایہ !
جو منظروں پہ کہیں سے پردے گرا رہا تھا
کہیں وہ کچھ کچھ دکھا رہا تھا ، کہیں وہ کچھ کچھ چھپا رہا تھا
کہ جستجو کو بڑھا رہا تھا
ہماری آنکھیں بس ایک پل کو جھپک گئی تھیں

Check Also

jan-17-front-small-title

گوادر کے مچھیرے  ۔۔۔ سلمیٰ جیلانی

کبھی ہم مچھیرے تھے جال میں پھنسی چھوٹی مچھلیاں پانی میں واپس پھینک ان کے ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *