Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » سمجھوتہ ۔۔۔۔ ثروت زہرا

سمجھوتہ ۔۔۔۔ ثروت زہرا

کیا ؟ سمجھوتوں کو کانچ کی چوڑیوں کی طرح

پیس کر کھایا جاسکتا ہے

تنہائی کے درد کو شیو کے نیل کنٹھ کی طرح

گلے میں رکھ کر جیا جاسکتا ہے

پیاس کو سنووائٹ کے نصف سیب کی طرح

حلق میں دبا کر موت کی نیند کا

وقفہ لیا جاسکتا ہے

مگر یہ سمجھتے تو میرے خون کو

زہر کی طرح نیلا کرتے جارہے ہےں

میری سانسوں کو اپنے بار سے

ادھ موا کرتے جارہے ہےں

Check Also

March-17 sangat front small title

نظم ۔۔۔ زہرا بختیاری نژاد/احمد شہریار

میں جبراً تم سے نفرت کروں گی تمہارے عشق سے میری زندگی کے حصے بخرے ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *