Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » سزائے موت ۔۔۔۔عابد کاظمی

سزائے موت ۔۔۔۔عابد کاظمی

ذرا موت سے پہلے کی بات ہے
جب میرے پَر نوچ لےے گئے
میرے سپنوں میں جو رنگ تھے
انہیں کھرچ کے اتار ا گیا
کہا گیا کہ تیری خواہش
قابلِ عمل نہیں
تم کو آزادی پسند ہے
جو ہماری طاقت کو گوارہ نہیں
تم اپنے لےے انتخاب رکھتے ہو
جو گناہ کے زمرے میں آتا ہے
ہمارے دائرے پھر کس کام کے؟
کیا اچھا ہوتا جو تم چابی پر چلتے
لیکن تم نے قدموں کا استعمال کیا
جو بغاوت کا اشارہ ہے
یہ ہمارے گھمنڈ کو پسند نہیں
اس لےے تمہیں سزائے موت دی جاتی ہے

Check Also

March-17 sangat front small title

نظم ۔۔۔ زہرا بختیاری نژاد/احمد شہریار

میں جبراً تم سے نفرت کروں گی تمہارے عشق سے میری زندگی کے حصے بخرے ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *