Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » کتاب پچار » دوستیں وڈّھ ۔۔۔۔۔۔۔ آغاگُل /اسحاق خاموش

دوستیں وڈّھ ۔۔۔۔۔۔۔ آغاگُل /اسحاق خاموش

نوکری چے کنگ ءاَت ،یک عزابے ئِ ات۔سجّہیں روچ ئِ کہ گواتا کشّ اِت آ،ریکاں بار دات۔ریکانی انگریں گوات نادراجاہ ئِ تہا پُترتگ ات۔ڈاکٹر غنی ئَ اے د´رست سگّگی اِتنت۔نادراہ جاہ ئِ کشا لوگ ات۔اگاں ناں گیشتر جاگہاں لوگ ہم نہ رسیت۔ڈاکٹر غنی آ زانتگ ات کہ ہمینچو سفارش بکنائینیت ،یک سالے ہر وڑا ہمے نادراجاہ ئَ گوازینگی اِنت۔آئی ئَ گوں نادراہ جا ہ ئِ چاگردا ہر ھسابا وتی تب ھوارگیجگی ات۔کسانیں اسٹافے ات۔یک دائمی نادراھے ات کہ برے نادراہ جاہئے تھت ئِ سرا وپتگ اَت اوبرے نادراہ جاہئِ کارو چُلوپگ ئے ِ ہم کُتنت گوں۔عمرئے ِ ہمے بیست و ھشت و سی سال ات۔گِندگ ئَ دراہ جانیں ورناھے اَت۔بلئے برے برے گنوکی ئَ گِپتگ ات۔پہک ئَ دیوانگ جوڑ بُوتگ ات۔کسّ ئَ داشت کُت نہ کُتگ اَت۔نادراہ جاہ ئِ کارندہاں لیویز ئِ سپاھیگ لوٹائینتگ اِتنت۔سپاھیگاں گِپتگ اَت او نادراہ جاہ ئِ تھت ئِ سرا واپینتگ اَت او پداڈاکٹرا انجکشنے جتگ ات،گُڑا بے سُدّھ بُوتگ ات۔لیویز ئِ سپاھیگاں گِپتگ ات و گاڑی ئِ تہا دو¿ر داتگ اَت و بُرتگ ات ماں حوالاتا بند کُتگ ات۔قادرا کہ وھدے سار کُتگ ات پدا دُنیائے ِ سرا زُرتگ ات ۔کسّا گوں دارگ نہ بوتگ ات۔حوالات ئِ آسن ئے ِ پ±روشگ لوٹ اتگ اِتنت اَنچو سما بُوت گُشئے آ ئی ئَ بنیادمہ سرا بد آھگ ئَ اِنت۔درستاں چہ زاہا کچ ئے ِ کُتگ اَت۔درستاں گوں کُنّتی اَت۔پدا بازیں روچاں رند کہ سارا اتکگ ات تہ گوں لہمیں گالوارا ورگ ئے ِ لوٹ اتگ ات و پدا چہ سپاھیگاں پہلی لوٹ اتگ ات ئے ِ۔سپاھیگاںآ پدا نادراہ جاہا سر کُتگ اَت۔قادر پدا وتی تھتا سرا شُتگ و وپتگ اَت۔گندگ ئََ آ جاں سلامت ءدراہ ات۔آ کئے اَت،چہ کُجا اتکگ ات، کسّا زانت کُت نہ کُت۔اگاں کسے ئََ بزانت اِنت گُڑا اے وھدی وتی سیاد و وارسانی کِرّا اَت۔
ڈاکٹرغنی ئِ واستہ اے عجبیں ندارگے ات۔چونائی ئَ زِندگ بوھگ ئِ واستہ اِشانی زلورت اَت۔آئی ئَ گوں قادر ا مُدام ت´ران و باوست کُتگ اَت اوقادرءدِل ئے ِ پیشکونڈ اِتگ ات۔قادر اوں لہتے روچ ئِ تہا گوں ڈاکٹر غنی ءھورتہور بُوتگ ات۔آئی ئِ کارئے ِ ہم کُتگ اِتنت گوں۔نادراہانی پرچی یے نبشتہ کُتنت، وارڈئِ رُپت و روپ ئے ِ کُت۔چو زر ھریدیں کاردارئِ وڑا ہر وھدا ڈاکٹر غنی ئِ ھزمتاا¾وشتاتگ اَت۔
یک روچے لیویز ئِ جمعدار وتی زھگ ئِ اِلاج ئِ ھاتر ا ڈاکٹر غنی ئِ کِرّا اَتک۔آئی ئَ قادر نادراہ جاہئِ رُپت و روپا دیست ،ھیران بُوت و پدا ڈاکٹرغنی ئَ رامُراد باتی دات ئے ِ ۔
“ڈاکٹر صاحب!نُوں قادر وشّ اِنت……چینچو شرّ اِنت دِل ئے ِ پِر اِنت نادراہ جاہئِ کاراںکنگ ئَ ا نت ….بلئے اشکُنگ ئَ آئی ءگنوکی گِر اَنت”
“ہو¿ آو¿کیں دہ روچ ئِ تہا پدا گِر اَنت ئے ِ……………………سالے بیت کہ من گِندگاآں۔نُوں منا تجربہ بُوتگ”جمعدارادرّائینت۔ڈاکٹر غنی ئَ ٹیبل ءسرا ایریں سالدر چار اِت۔©”دَہ روچ ئِ متلب اے بیت کہ چاردہ ئِ شپا……………………ماہ کہ جُوھان بیت“۔
“بِزاں قادر ئِ گنوکیءَگوں چاردہی ماہاسیادی اَست؟”
ڈاکٹر غنی ئَ وتی دِل ئَ جیڑ اِت۔
“بلئے اے گنوک بُوت چوں؟”
لیویز ئِ جمعدار ا سارتیں گِینّ یے کشّ اِت۔
“چے بُگشاں،اے دراجیں کِسّہ یے ، دگہ برے گُشاں ترا۔۔انّوں تئی کِرّا نادراہ باز اَنت۔گِیشّ و جہل بیگاھے بیا شام اوں ھوری ئََ کنیں”
ڈاکٹر ایوکی ئَ جیڑگاں سکّ بیچاڑ کُتگ ات۔آئی ئَ دمانا جمعدار ئِ دعوت کبول کُت۔
شام ئِ وھدا گپّ و تران ئِ بُنگپ قادر اَت۔
“قادرا وتی میتگ ئِ جنکے ئَ گوں سُور کنگ لوٹ اتگ ات۔آ،روچاں آ ،نوشکی کالجا بی۔ اے ئِ نودربراَت۔میتگ ئِ مردُماں چہ آئی ئَ مزنیں ا¾وستے داشتگ ات کہ اولی رند ا چہ آھانی میتگئَ ورناھے افسرے جوڑ بیت۔اے سُتکگ وبے آپ و چراگجاھیں کوھانی تہا کہ دہ بیست لوگانی ھلکے اتءُکسے اِشانی ھالا سئی نہ ات۔برے ڈُکّال کپت۔برے مردُماں آپ ئِ شوھازا پندانی پند بُرّ اِتنت۔مال و دلوت آھانی زِند ئِ مڈّی اِتنت کہ ھمیشاں زِند ئِ روچانی تیلانک دئیگ ئَ کُمک کُتگ اَت۔اگاں چراگجاہاں کاہ مہ رُستیں ………………..زِند ہم دیما نہ شُتگ اَت۔ھیر! قادر ئِ پِت و ماتا سُورہ تیاری کُت۔غریبی،غریبی اِنت …………وڑے ناں وڑے بکس و بند اِش کُت۔جنک، کہ آئی ءِ نام آمنہ اَت۔گوں قادرا باز مہر ئے ِ داشت۔ سُور ہ روچ ئَ ورگ گردگ ءَاِتنت۔نکاہ ئِ چِن و لانچ اَت۔اناگہ ٹرک یے اتک ……………….. سپاھیگ اِش ہم گون اِتنت۔آھاں پرمان دات کہ زُوت وتی اَزباباں بُزور اِت وٹرکانی تہا سر بِکپ اِت۔اے دَمَگ ھالیگ کنگی اِنت ……………….. مردُماں باز زہرشانی کُت۔اے بے آپ و ویرانیں کوہ کہ آہانی بُنکی ھنکین اِنت آھاںپرچہ ادا چہ در کپگی اِنت۔آھانی میارو گُناہ چی اِنت؟۔زہرشانی ئَ پد ورنا ہِژم گِپت اَنت کہ اے مئے ھند و دَمگ اِنت ،مئے ھلک اِنت،ما پرچہ وتی لوگاں یلہ بدئیں۔کماشاں ورنا مکن کُتنت و چہ سپاھیگاں دزبندی کُت کہ آھاں ھمد ابِلّ اَنت اوپدا مرچی سُورئے روچ اِنت۔مہمان اوں اتکگ اَنت۔آھاں سپاھیگاں ورگ اوں دات …………….بلئے سپاھیگاں نہ منّ اِت ۔گوں دیناںدستی ازباب اش چُست کُت و ٹرکانی تہا ماں بُرّ اِتنت۔گدان اِش ہم گوتک اَنت………………..پدا چے بُوت…………….ورناھاں سپاھیگانی سرا اُرش کُت …………….بے سلاہ اِتنت …………….کسے ئِ دستا لٹّ یے اَت ،کسے ئِ دستا ڈوک یے …….شُکر اِنت کہ سپاھیگاں تِیرگواری نہ کُت۔سپاھیگ چہ آھاں گیشتر اِتنت و پدا آھاں سلاہ ھم گون اَت۔آھاں ورنا گوں تپُنگانی کُنداکاں ژند کُتنت …….آھاں آ ،یک یکّئَ گِپت و ٹرکانی تہا دو¿ر داتنت۔ قادرا سُوری پوشاک گ´ورا اِتنت۔آئی ئَ وتی سیاد و وارس ھون و ھونریچی ئَ دیست اَنت ،سپاھیگانی سرا گیشتر ہِژم گِپت۔گوں آھاں اَنچو دست و گورجیگ بُوت اَنچو کہ یک ٹپّی ایں مزارے نہرداں بکنت۔
آئی ئَ لٹّ یے چِت وبازیں سپاھیگے ٹپیّ ئے ِ کُت۔آئی ئِ جانا کہ کُنداک لگّ اِتنت ٹپّی بُوہانا کپان اَت وپدا چست بوہان اَت۔پدا گوں سپاھیگاں دست و گورجیگ اَت۔آمنہ ئَ اوں آروسی پوشاک گورااِتنت۔آئی ئِ کماش و قادر ھون و ھونریچ اِتنت او یک بے سوبیں جنگے ئَ اِتنت۔
آمنہ ئَ د¾ود ئُُ رسم کِمار نہ کُتنت ۔تپرے چِت و ڈنّاتچان بُوت۔دو سئے سپاھیگ ئے ِ ٹپّی کُت۔بلئے انچیں کُنداکے ئَ لگّ اِت کہ تُتار بُوت و کپت۔سپاھیگاں آ ،اوں چست کُت و زالبولانی ٹرکہ تہا دو¿ر دات۔قادرا ماں سرا ہمینچو کُنداک وارتگ ات کہ بے سُدھ ات ……پدا باریں آ ٹرک ئَ کُجا بُرت او کُجا ایر گیتک۔کئے پشت کپت،کئے مُرت،سرجمیں ھلک ھالیگ بُوت۔باریں مردُم کُجا شُتنت۔
“بلئے چُشیں چونیں کیامتے آھگی ات کہ دیناںدستی سرجمیں ھلک اِش ھالیگ کُت؟”
“اصل ئَ مارا چہ ھمساھگیں مُلکاں تُرس اِت ،ایٹمی تراک کنگ الّمی اَت کہ دُژمن بُتر سیت۔ہماھانی کِرّا کہ ایٹم بمب اَست ۔ھماھمساھگ چہ آئی ئَ تُر س اَنت۔من نزاناں کہ چہ شُدیکیں مردُماں دُژمن چیا تُرسیت۔آھانی لاپ کہ ھالیگ اِنت ،آ ایٹم بمب ئَ چے کننت۔افسوز کہ ایٹم بمب ئِ تجربہ اوں مئے زمین ءسرا کنگ بُوت۔گُشنت کہ تاں دہ سالا اِدا ریڈی ایشن( Radiation )”تابکاری“ بیت”۔
ڈاکٹر غنی ءسرا دِلپ±روشی یے ئَ مانشانت۔
“پدا چے بُوت…..ھمساھگاں تُرس اِت گُڑا؟چہ تُرسا لرزگ ئَ لگّ اِتنت،تپ ونادراہی ئَ گِپت اَنت،آ ،اَنچو تُرس اِتنت کہ مِسّ اِش نہ ا¾وشتاتنت؟”
لیویز جمعدارا وتی کم زانتی منّ اِت۔”چو من نزاناں کہ پدا چے بُوت ۔بلئے لہتے سالاپد من بازارا گنوکے دیست۔من ہما دماناپجّاہ آو¿رت۔آ،قادر اَت کہ چٹ گنوک اَت۔آئی ئَ ہچ گِیر آھگ ئَ نہ ات۔من آ نادراہ جاہاآو¿رت ۔پُچ ئے ِ دِرتگ اِتنت۔دیم ئے ِ ٹپّی اَت۔ما آئی ءِ نگہداری کُت……آئی ئِ اِلاج کُت۔کم کمّ ئَ آئی ئِ ٹپّ وشّ بوتنت بلئے ہوش ئے ِ برجاہ نہ بُوت”۔
کمّو دیر ادوئیناں ہچ نہ گُشت۔ورگارند چاہ واری بُوت۔
تُنّیگیں بلوچستان ئِ ماہ پدا سرکشّان اَت۔ما ئُُ بنی آدم وتی ٹپّاں وت تیمار اَنت۔ڈاکٹر غنی ئَ ھیال کُت آ ،نوں ایوک اِنت ،دہ روچ پشت کپتگ …………….چاردہی ماہاباریں آ قادرا چہ گنوکی ئَ رکھّینت کنت …………….چینچو نام آئی ئَ رسیت و پدا شرپ و شان ہم ………………..نادراہ ہم گیشتر آئی ئِ کِرّا کاینت …………….یکبرے آئی ئَ زرّ کمائینت گُڑا پدا آ زرّئِ ز¾ور ا یک شرّیں پوسٹ یے ہم بہا گِپت کنت۔کشت و کشاری نادراہ جاہانی(زرعی اسپتال) تہا زرّ چو ھو¿رہ رِچیت …………….زرّ رُدیت ا¾ودا………………..نادراہ جاہ ئِ ناد´±راہانی کیسّگ زرّ ،زرشان اَنت۔
ڈاکٹر غنی ئَ زانتگ ات کہ ماہ عشقا چوں گنوکی درکاریت۔ماہ دریاھاں چو¿ل پرمائیت۔ماہ((Luna ئِ عشق اِنت کہ دیوانگاں ”Luantic“گُشگ بیت۔اگاں قادر چہ چاردہئِ ماہا رکّھینگ بہ بیت تہ زاھر اِنت کہ آئی ئِ سرا گنوکی ئَ ایسپ گِندگ نہ بنت۔
ڈاکٹر غنی ئَ قادر کمّو بازوابگیجگی درمان) ٹرینکولائزر(ہم دئیگ بِناکُتگ اَت۔
چاردہ ئِ ماہا چہ دو روچا پیسرغنی ئَ دیست کہ قادرہ تب بدل بوھان اِنت۔ز¾وراکی یے تالان بوھان اِنت آئی ئِ دیم ئَ چمّانی رنگ ہم بدل بوھان اِنت۔آئی ئَ دو گولی قادر ا را وارینت۔قادر ا چہ انجکشنا سکّ تُرس اِت بلئے گولی ئِ ورگ ئَ اِنّا نہ کُت ئے ِ۔
“بچار قادر من مرچی آئی ئَ کاراں ۔ہما جنک ئَ،ترا یات اِنت ناں…………….آئی ئِ نام…………….تئی دِشتار”
“نام” قادر ئَ کمّو بچکند اِت۔”ہو¿ نامے بلئے یات نہ اِنت۔ہزاراں رنگ و دروشم دیما گوزنت ۔ابید پجّارگ ئَ شِگ´وزنت و رو¿نت…………….تو آئی ئَ کارئے ؟”
“ہو¿ من ڈاکٹرے آں ………………..من کاران ئے “۔
“تو آئی ء پکّا کارئے ؟” قادر آئی ئِ دست و پاداں کپت۔
“آئی ئَ بیار پدا تُریں منا تیرے بجن ،بُکُش……………. یکبرے آئی ئَ بیار…………….من تئی غُلام باں……………. آ،منی ارواہ اِنت…………….منی ارواہا بیار ڈاکٹر…………”
جَوزگانی گیشی ئَ قادر ئِ دیم سُہر ترّ اِتگ اَت۔آئی ئِ توار جہل اَت۔آئی ئِ گنوکی پدّر بوھان اَت۔غنی ئَ تُرس اِت۔نادراہجاہ ئِ چاگرد ئَ ھاموشی یے تالان اَت و آ یک ز¾ورمندیں گنوکے ئَ گوں ایوک ئَ نشتگ ات۔آ،گنوک ئَ گُشئے آئی ئِ ساہ اوں کبز کُتگ ات۔
” ترا یات اِنت قادر! آئی ئِ نام آمنہ اِنت”
قادرپچ پُلّ اِت۔”ہو¿ آمنہ اِنت آئیئِ نام …………….آمنہ،بلئے آمنہ کُجا اِنت؟”
“پر آئی ئِ ھاتر ئَ تو یک انجکشن یے بجن”
“من آمنہ ئِ ھاتراجان ئَ دات کناں”۔قادر جزباتی ات ڈاکٹر غنی ئَ ہما دمان ئَ انجکشن یے دستا گُتّ دات۔
“پاد میا کہ آ دِلگ±ران بیت۔من آئی ئِ آرگ ئَ رو¿گاآں”
“بجل ڈاکٹر!منا گِیر آھگ ئَ اِنت ۔اے مُندریک ئَ برگوں او ہمائی ئَ پیشدار…………….اے ہمائی ئِ مُندریک اِنت،آ پجّاہ کاریت ئے ِ”
ڈاکٹر غنی ھبکّہ بُوت کہ اینچو سالانی ئَ گنوکی ئَ ابید آئی ئَ مُندریک چوں پہریز اِتگ …..آئی ئَ وتی دستئِ لنکُک ئَ قادر ءداتگیں مُندریک مان کُت۔ارزان بہائیں نُگرہ ئِ مُندریکے اَت۔عقیق یے ہم مان اِت ئے ِ۔سُہریں چمّ نگینہ ئِ تہا پدّر اَت۔بُوت کنت کہ واستارے ئَ چہ وتی دیوانگ ئِ دست ئَ پچگرگ ئَ شرّ نہ لیکھ اِتگ ات۔
سجّہیں شپا قادر وپت۔باریں آ،چون چہ ماہ ئِ چکماکی شہماں رکّھ اِتگ ات۔نوں وَ ہر شپ آمنہئِ راہا چارگ ئَ ات۔
ہمے رھبنداکاردات۔چاردہی شپ اوں گوست۔قادر گنوک نہ بُوت۔درستاں ڈاکٹر ئِ ستا و توسیپ کُت۔ھند و دمگاں ڈاکٹر ئِ نام پُرشت۔نادراہ جاہا ناد±راہانی کساس اوں روچ پہ روچ ودّان بُوت۔
ڈاکٹر غنی ئَ قادر دائمئَ آمنہئِ نامہ سرا کار گِپت۔”آمنہ کئیت ،ناد±راہجاہ ئِ کوٹی ئَ شرّ ر¾وپ و سپا بکن……………. آمنہ کئیت فرشا چو شیشگ ئَ درپشناک بکن”
قادر ا گوں دِل ئَ کار کُت۔ابید چہ دمبَرگ ئُُ کِنتگ و نارگ ئَ شپ وروچ کار ئے ِ کُت۔ڈاکٹر غنی ئِ اِرادگ ات کہ نوکیںپوسٹنگ ئَ قادرا ببارت گوں۔اے وڑیں نوکر وَ ہچ جاگہ دست نہ کپیت۔نوکر چے اے وَ چہ رومن غُلاماں دستے دیما ات۔غنی ئَ آمنہ ئِ مُندریک ئِ دئیگ و زُورگ ئِ نُوں عادت بُوتگ اَت۔آئی ئَ چہ قادر ئَ مُندریک پچ گِپتگ ات دستا کُتگ ات و پدا قادر ئَ داتگ اَت ۔غنی ئَ وَ باز وھدا سجّہیں روچ ئَ مُندریک دست ئَ ات۔گُشئے مُندریک ئَ آئی ئِ بھت پاد کُتگ ات۔آمدن ودّ اِتگ ات و نام و شرپ ہم گیش بُوتگ ات۔غنی ئِ واستہ وَ اے یک طلسمی مُندریکے ات کہ ہمیشی ئِ سَوبا یکّے آئی ئِ غُلام اَت۔ہرچی کنگ ئَ جاڑی ات۔مُندریک قادر ئِ ریموٹ کنٹرول اَت۔آمدنئِ گیشتریں بہر چہ ڈنّ و گ±ور ئِ نادراہاں در اَتکگ ات۔کہ ہر روچ غنی اِش لوٹائینتگ اَت۔ہمے وڑا یکروچے یک مردے ئَ وتی گاڑی دیم دات ئُُ ڈاکٹر غنی لوٹائینت۔ڈرائیور ئَ گُشتگ ات کہ بانُک وشّ نہ اِنت۔تاں دُور دُور ا دگہ ڈاکٹرو نادراہجاہ ئِ نام و نشان نیست ات۔غنی ہمے تیوگیں دَمَگ ئِ یکّیں ڈاکٹرا ت۔اگاںچِہ حکیمئُُ کلّگی کّواس وَ باز ات۔لیڈی ڈاکٹر ئِ وَ ھیال نیست اَت۔
“بچار قادر!نادراہجاہ ئِ ھیالداری ئَ بکن گوں ۔ورگ بِگ±راد و بور……………. من آمنہ ئِ شوھازا رو¿گاآں…………ورگانی تہا وادکمّ مان بکن ۔…………….”
ڈاکٹر غنیئَ رو¿گ ئِ وھد ا قادر سرو سوج کُت۔ قادرا مُندریک پدا ڈاکٹر غنی ئِ دستا دات تانکہ آمنہئے ِ پجّا ہ بیاریتئُُ قادر ئِ واستہ بئیت۔
قادر اپہ دِلمانگی گُشت۔”ڈاکٹر ایشی ئَ المّ ئَ پیش بدارئے ،آ گندیت ئے ِ کئیت گُڑا”
ھلک کساس بیست و پنچ کلومیٹر پَشت اَت۔سیر و آبادیں لوگے ات۔نادراہ تپا گپتگ اَت۔ڈاکٹرا انجکش یے جت۔ڈاکٹر ا تپ ئِ جہل آرگ ئِ ھاترا” کولڈ اسپنچنگ“و سارتیں آپ لوٹ ات۔کہ اے ھلک ئَ ہچ وڑا نیست ات۔نادراہ ئِ لوگواجہ ئَ گاڑی زُرت و درکپت کہ چہ نزّیکیں بازار ا برف بیاریت۔یکّ و دو جنیادم ہمساھگانی کُمباں چہ سارتیں آپ ئِ پچ گِرگ ئَ شُتنت۔چونائی ئَ ڈاکٹر ئِ مزنیں نامے ات۔آ،نادراہ ئِ کِرّا ایوک ئَ نشتگ اَت۔آئیئَ نادراہئِ نبض چاراِت،اناگہ آئی ئِ چمّ ناد´راہ ئِ پیشانیگ ئَ کپت انت کہ ٹَپّ یے پِر اِت ئے ِ کہ آئی ئَ گوں وتی شِنگیں مُوداں چیر داتگ ات۔آئی ءِ چمّ بند اِتنت وبے سارات۔چُشیں زیبداریں دیم ئِِ سرا اے ٹپّ…………….آئی ئَ دِل ئَ نہ مرّینت۔”ترا اے پیشانیگ ئِ ٹپّ چونائی ئَ لگّ اِتگ”۔ لہم لہم ئَ جُست ئے ِ کُت۔
ناد´±راہ ئَ چمّ پچ کُتنت۔”مئے میتگ دیناںدستی ھالیگ کنگ بُوتگ ات۔ایٹمی تراک ئِ ھاتر ئَ ………………..اَنچو جنگ ئِ تہا اے ٹپّ لگّ اِتگ …………….من چہ وتی ساہا سرگوستگ اِتاں بلئے ہچ پشت نہ کپت………………..”
غنی ئَ گُمان کُت کہ نادراہ لاپ پُرّ اِنت……………. چُشیں زیبناکی،چُشیں دِلیر ی و چُشیں وت بھیسہی………………..بلکیں آمنہ ہمیش اِنت۔آئیئِ دِل ئِ دریکگ گیش بُوتنت۔پیشانیگئَ ھید ے ئَ سر کُت۔بے ھیالی ئَ آئی ئَ وتی دست پیشانیگ ئَ مُشت۔ھمے دماناترندیں تپا ابید نادراہ ہما دمان ئَ پاد اتک و نِشت۔آئی ئَ ہچ چیز کِمار نہ کُت و پہ نَمہتلی ڈاکٹر غنی ئِ دست ئے ِ گِپت و داشت۔
“قادر ئِ مُندریک!قادرزِندگ اِنت؟”
ڈاکٹرغنی ئِ دِل تورہ بورہ وزیرستان جوڑ بُوت۔ہزاراں بمب گوارگ ئَ لگّ اِت۔آ،درہگ ئَ لگّ اِت۔”بُگُش قادر زِندگ اِنت”۔غنی ئَ ھیدے ئَ سر کُتگ ات۔بازیں زِندے ئِ جُست اِتنت۔”اِنّاں قادر ہما جنگ ئَ جَنَگ بُوتگ ات۔من باز جُہد کُت بلئے آ،پشت نہ کپت”۔
آمنہ پدا بے سار بُوت و نپادانی سرا کپت۔آمنہ ئِ ارس گُشئے غنی ئِ دِل ئِ سرا کپگ ئَ اِتنت۔گوں ہمے گپاّ آمنہ ئِ جان سارت ترّان ات۔ہمے دمانا زالبولاں آپ آو¿رت و دیست اِش تپئِ نام و نشان نیست۔ھیدہم زاھر نہ اَنت۔آہاں ڈاکٹر ئِ توسیپ و ستا ءکُت۔یک نیم عمریں زالبولے ئَ ڈاکٹر ئِ سرا دست ایرمال اِت و نیک دُعائی کُت۔ہمے گَل ئَ آ پاد اتک و پہ ڈاکٹر ئَ چاہ ئِ اڈّ کنگ ئَ شُت۔
نادراہ ئِ بلڈ پریشر کم بوھان ات۔آئی ئِ نارمل کنگ ھژدری اَت۔ڈاکٹرغنی ئَ لہم لہم ئَ گُشت۔
“آمنہ ہمت کن،پادآ،منی کِرّا وھد نیست۔انّوں مردُم کاینت”۔آمنہ ئَ چمّ پچ کُتنت۔کمّودیراں آئی ئَ گوں ابیتکیں چمّاں چار اِت۔پدا ہمت ئے ِ کُت و گوں سرجاہ ئَ تکہ ئے ِ دات۔آمنہ ئِ اَرس رِچگ ئَ اِتنت۔لُنٹ لرزگ ئَ اِتنت۔آئی ئِ کُلّیں واب پ´ُرشتگ اِتنت۔ا¾وست و اُمّیت بے زِند اِتنت۔آئی ئِ دِل ئَ سیاھیں شپے ئَ مانشانتگ ات۔
“ڈاکٹر!نوں ما باز زورمند جوڑ بُوتگ ایں…………ما ایٹمی تاگت جوڑ بُوتگ ایں!مئے ھمساھگ چہ مارا تُرس اَنت باریں؟ چے ھمساھگانی تُرسگ الّمی اِنت؟مہرومُحبّتاں چہ ہم گیشتر!”
پادبرمش نزّیک ئَ اَتک انت۔آمنہ ئِ لوگ واجہ ئَ سارتیں آپ و برف گون اِتنت۔آمنہ ئَ ارس پَہک کُتنت و لُنٹ گٹّ چِتنت تانکہ آئی ئِ دیم ئِ سرا تکانسری زاھر مہ بیت۔آمنہ ئِ لوگواجہئَ پہ گَلے برف گون اِتنت وپیداک اَت کہ آئی ئَ مزنیں تچ و تاگے ئَ درگیتکگ اِتنت۔
آمنہ ئَ لہم لہما درّائینت۔”ڈاکٹر! دوستیں وڈّھ اسپیت ترّ اِتگ چہ تراک ئَ! آئی ئَ گرّ اِنت۔کوہ گرا گِپتگ اَنت۔تو بچار اے گَرّ ئِ نادراہی تیوگیں زمینا مانشانیت۔بہ بر اے برف و سارتیں آپاں منی سر ئَ اِنّاں………………..دوستیں وڈّھ ئِ سرا بہ ریچ اِش”۔

Check Also

jan-17-front-small-title

غدار ۔۔۔۔ مبصر : عابدہ رحمان

مصنف: کرشن چندر ’غدار‘ کرشن چندر کا وہ شاہکار ناول ہے جو ہندوستان کی تقسیم ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *