Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » دستک ۔۔۔ ثروت زہرا

دستک ۔۔۔ ثروت زہرا

کی باتی کھول کے کرنیں
دھوپ پہننے نکل پڑی ہیں
ہستی کے سب دروازوں پر
دستک کی پازیب بجی ہے
خواب سرا کے اندھیارے میں
خون کی خوشبو جا گ گئی ہے
آدم بو…….. آدم بوآواز پڑی ہے
ماس…….. اور ہڈی
جسم کے ریشے بُننے والی روح کی کھڈی
مجھ کو سات بسنتوں والا
بُن کر ایک سراپا دے دے
اوجِ فلک سے شام کی رُت کا
تھوڑا سا ہی غازہ دے دے
سرمئی لب کو وقتِ طلوع پہ
کھلنے کا دروازہ دے دے
شوق سفر کو……..
دھڑکن کا آوازہ دے دے
آنکھوں کی اس گیلی رتوں کو
سرمئی ہواکا وعدہ دے دے
ذادِ سفر کو ہستئی جاں کا
تھوڑا سا شیرازہ دے دے

Check Also

March-17 sangat front small title

نظم ۔۔۔ زہرا بختیاری نژاد/احمد شہریار

میں جبراً تم سے نفرت کروں گی تمہارے عشق سے میری زندگی کے حصے بخرے ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *