Find the latest bookmaker offers available across all uk gambling sites www.bets.zone Read the reviews and compare sites to quickly discover the perfect account for you.
Home » شیرانی رلی » اے مزدورو ۔۔۔ حاتم جنید قیصر

اے مزدورو ۔۔۔ حاتم جنید قیصر

گھروں کے دیپ لہو سے روشن رکھتے ہوتم لوگ
تمہارے لیے ہر دم ماں کے مچلتے پل کی دعا
تم سلامت رہو خدا کی رحمت سے حلال کمانے والو
اِک بہن کی انکھوں سے آنسو پونچھتے آنچل کی دُعا
تڑپتے دل کی دُعا دُکھوں سے محفوظ رہو اِے مزدورو
اے مزدورو
دُھوپ جیٹھ ہاڑ کی باتیں کرتی ہے زمیں سے کیا
تم جانتے ہوئے ٹھنڈ پوہ ماگھ کی دلفریب ہے کتنی
کبھی سُلگتے ہو تم لوگ کبھی ٹھٹھرتے ہو پہروں میں
زندگی کی حقیقت تمہیں معلوم آخر پُر آسیب ہے کتنی
اِے ازل سے تھکن لکھوالائی رُوحو مشقت سے چُورو
اے مزدور
تھپک کے تمہیں سُلاتی ہے اَن گنت تفکرات کی وحشت
کبھی ستاروں کو دیکھنے تمہاری آنکھ کُھلی نہ ہوگی
ہزاروں ساون گُزرے زمیں کی کھیتی کو سیراب کرنے والے
لیکن پسینے سے شرابُور تمہاری جاں دُھلی نہ ہوگی
سُنو اَشجارِ آس پہ جُھولتے ہو شاخِ اُمید کے بُورو
اے مزدورو
جُھوٹ تم نے کبھی موج میں بَسر کیں شباب کی منزلیں
کہ ہوش سنبھالا ہوگا فاقہ کشی کے گھر میں
کیا گھر کا ذکر غربت نے اک جگہ ٹِکنے نہ دیا
تمہیں دو سانس اَماں نہ ملی خوشی کے گھر میں
گردشِ ایام کو حقیقتاً تم جانتے ہو دھرتی کے بے قصورو
اے مزدورو

Check Also

March-17 sangat front small title

نظم ۔۔۔ زہرا بختیاری نژاد/احمد شہریار

میں جبراً تم سے نفرت کروں گی تمہارے عشق سے میری زندگی کے حصے بخرے ...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *